اب انسانی خون سے بھی بجلی بن سکتی ہے -
The news is by your side.

Advertisement

اب انسانی خون سے بھی بجلی بن سکتی ہے

اسرائیل میں ایک طالبہ نے نئی قسم کے زیورات تیار کرلئے ہیں جنہیں انسانی جسم کی رگوں میں پیوست کیا جائے گا اوریہ سجاوٹ کے ساتھ بجلی بھی پیدا کریں گے، ان زیورات کے دو سروں پر باریک سوئیاں لگائی گئی ہیں ،جو فون اور دیگر اعضاءکی حرکی توانائی کو بجلی میں بدلیں گے، یہ زیورات اینرجی ایڈکٹس کے نام سے متعارف کر وائے گئے ہیں اور ابتدائی طور پر ان کے تین ڈیزائن فروخت کیلئے پیش کئے گئے ہیں۔

بلڈ بریجڈ نامی زیور کے بازو کی رگوں میں پیوست کیا جانا ہے جبکہ  دی بیلنکر کو ناک کی ہڈی میں پیوست کیا جاتا ہے جو آنکھوں کے جھپکنے کی وجہ سے دوران خون اضافے کو بجلی بنانے کیلئے استعمال کرے گا۔ اسی طرح ای-پلس نامی زیور کو کمر کی رگوں میں پیوست کیا جاتا ہے اور یہ ریڑھ کی ہڈی کی عصبی خلیوں سے توانائی لے کر بجلی بنائے گا۔

ان زیورات کی موجد نومی کذنر کا کہنا ہے کہ جدید دور میں توانائی ہی سب سے اہم چیز ہے اس لئے ہمیں ایسے زیورات کی ضرورت ہے جو کم از کم اتنی بجلی پیدا کرسکیں کہ اس سے موبائل فون چارج کیا جاسکے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں