The news is by your side.

Advertisement

مادھوری ڈکشت آج اپنی 48ویں سالگرہ منارہی ہے

ممبئی : بالی ووڈ اداکارہ مادھوری ڈکشت آج اپنی  48ویں سالگرہ منارہی ہے۔

کروڑوں دلوں پر راج کرنے والی مادھوری ڈکشت15 مئی 1967 کو بھارتی ریاست مہارشٹرا کے شہر ممبئی میں پیدا ہوئیں،  تین سال کی عمر سے رقص سیکھنے والی مادھوری کا ہمیشہ سے مشہور اداکارہ بنے کا خواب تھا۔

مادھوری ڈکشت نے 1984 میں  اپنے کیرئیر کا آغاز فلم ابودھا سے کیا، تاہم 1988 میں فلم ’’تیزاب ‘‘ نے مادھوری ڈکشت کو شہرت کی بلندیوں پر پہنچا دیا، اس فلم میں انیل کپور ان کے ہیرو تھے، مادھوری کی خوبی ہے کہ ہر طرح کے کردار میں خود کو ڈھال لیتی ہیں اور ان کی جوڑی ہر اداکار کے ساتھ کامیاب بھی رہتی ہیں۔

مادھوری کی فلم ‘تیزاب’ سے ان کی کامیابی کا سفر شروع ہوا، اس کے بعد سن 1990 میں مادھوری فلم ‘دل’ میں عامر خان کے ساتھ جلوہ گر ہوئیں، مادھوری کی یہ فلم سپرہٹ فلم ثابت ہوئی اور انھیں بیسٹ ایکٹریس کا پہلا ایوارڈ ملا۔

فلم دل کے بعد مادھوری اس وقت انڈسٹری کی نمبر ون ہیروئن بن گئیں، جب انھوں نے سلمان خان اور سنجے دت کے ساتھ فلم ‘ساجن’ میں  اپنی اداکاری سے سب کو حیران کردیا۔

فلم ‘بیٹا’ میں مادھوری ایک بار پھر انیل کپور کے ساتھ جلوہ گر ہوئیں، اس فلم کے گانے ‘دھک دھک’ نے باکس آفس پر آگ لگا دی، جس کے بعد سن 1993 میں مادھوری کی فلم ‘کھل نائیک’ میں  چولی کے پیچھے گانا بھی دھک دھک کی طرح سب کی زبان پر تھا۔

مادھوری نے 1994 میں پہلی بار شاہ رخ خان کے ساتھ فلم ‘انجام’ میں کام کیا، اس فلم میں الگ انداز میں اداکاری کرکے لاکھوں دلوں پر راج کرنے لگی۔

اسی سال مادھوری نے سلمان خان کے ساتھ فلم ‘ہم آپ کے ہیں کون’ میں ایسی سپرہٹ پرفارمنس دی، جس نے بالی وڈ کی تمام سپرہٹ فلموں کے ریکارڈ توڑ دیئے۔

انیس سو ستانوے میں مادھوری ڈکشت کی فلم ‘دل تو پاگل ہے’ میں اداکاری دیکھ کر شائقین مادھوری کے دیوانے ہوگئے۔

مادھوری نے یارانہ، راجا، لجّا، پکار اور دیوداس جیسی کئی کامیاب فلموں میں اداکاری کا مظاہرہ کرتے ہوئے بہترین اداکارہ کے کئی ایوارڈز جیتے۔

مادھوری نے 1999 میں ڈاکٹر شری رام نینے سے شادی کے بعد بالی وڈ کو خیرباد کہہ دیا اور اپنی ازدواجی زندگی میں مصروف ہوگئیں۔

مادھوری  ڈکشت نے دوہزار سات بالی ووڈ میں واپسی کا اعلان کیا، جس کے بعد فلم ”آجا نچلے “ دیکھ کر مادھوری کے مداح یہ کہنے پرمجبورہوگئے کہ مادھوری ایور گرین ہے، جسکے بعد مشہور ڈانس ریائلٹی شو’’جھلک دکھلا جا‘‘ کے سیزن فور اور فائیو میں جج کے فرائض انجام دیتے ہوئے بھارتی عوام کے دلوں پر راج کرنے لگی۔

اپنی مسکراہٹ سے کروڑوں دلوں پر راج کرنے والی مادھوری کے نام پر جون 2012 میں ‘ستاروں کا ایک جھرمٹ’ منسوب کیا گیا، اس سلسلے میں دی ایمپریس نامی ایک گروپ نے مادھوری سے مل کر سرٹیفکیٹ بھی پیش کیا جس کو دیکھ کر وہ حیران رہ گئیں اور اپنے پرستاروں کا شکریہ ادا کرنے پر مجبور ہوگئیں جن کی بدولت انہیں یہ اعزاز حاصل ہوا۔

مادھوری ڈکشٹ کا نام نہ صرف فوربز میگزین میں بھارت کے صفِ اول کے پانچ طاقتور ترین فلمی ستاروں میں شامل ہے، انہیں انڈیا کے چوتھے بڑے سویلین اعزاز پدما شری سے بھی نوازا جاچکا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں