site
stats
عالمی خبریں

اردن: القاعدہ کے 2 قیدیوں کو پھانسی دیدی گئی

اردن: شدت پسند تنظیم داعش کے ہاتھوں پائلٹ کی ہلاکت کے بعد اردن نے خاتون سمیت دومجرموں کو پھانسی دے دی گئی۔

غیرملکی میڈیا کے مطابق سزائے موت پانے والوں میں خاتون ساجدہ الرشاوی شامل ہے، جس کی رہائی کا مطالبہ داعش نے کیا تھا جبکہ عراق میں القاعدہ کے رہنماء زیاد کربولی کو بھی پھانسی دے دی گئی ہے۔

ساجدہ دوہزار پانچ میں عمان میں ناکام خودکش حملے کے بعد سے قید تھی۔

ساجدہ الرشاوی پر 2005ء میں خودکش دھماکے میں ملوث ہونے اور زیاد کربولی کو 2008ء میں اردن کے شہری کو قتل کرنے پر موت کی سزا سنائی گئی تھی۔

اردن حکام کا کہنا ہے کہ ساجدہ الرشاوی اور عراق میں القاعدہ کے رہنماء زیاد کربولی کو آج صبح سزائے موت دے دی گئی۔

القاعدہ ارکان کو سزائے موت داعش کے ہاتھوں اردنی پائلٹ کی ہلاکت کے بعد دی گئیں، اردنی پائلٹ کے زندہ جلائے جانے کی ویڈیو گذشتہ روز منظرعام پر آئی تھی، ویڈیو میں بظاہر دکھایا گیا کہ اردن کے مغوی پائلٹ کو زندہ جلا دیا گیا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top