The news is by your side.

Advertisement

اسحاق ڈار کے آئی ایم ایف سے مذاکرات کامیاب

دبئی : آئی ایم ایف سے مذاکرات تو کامیاب ہوگئے لیکن دو ماہ بعد بجلی گیس مہنگی ہوگی، صلے میں آئی ایم ایف نواز حکومت کو جون میں پچاس کروڑ ڈالر کا قرضہ دیگا۔

بالاآخر وزیرِخزانہ اسحاق ڈار آئی ایم ایف حکام کو پاکستان لے ہی آئے، پہلے دبئی میں مذاکرات ہوئے  اور پھر اختتامی پریس کانفرنس  اسلام آباد میں ہوئی۔

آئی ایم ایف نے پاکستانی معیشت کا ساتواں جائزہ مکمل کرلیا، اسحاق ڈار خوش ہیں کیونکہ وزیر خزانہ آئی ایم ایف کے ساتھ مذاکرات کامیاب رہے لیکن اس کامیابی کی بھاری قیمت عوام کو چکانا پڑے گی۔

وزیر خزانہ اسحاق ڈار اعتراف کرتے ہیں کہ آئندہ مالی سال سے بجلی پر دی جانے والی سبسڈی بتدریج کم کی جائے گی

دوسری جانب آئی ایم ایف پاکستان مشن کے سربراہ نے نیوز کانفرنس میں بغیر کسی لگی لپٹی کے کہہ دیا پاکستان میں آئندہ مالی سال سےمہنگائی بڑھنے کا خطرہ ہے، اگر پاکستان کو ترقی کرناہے تو اُسے توانائی بحران حل کرنا ہوگا، پاکستان ہر قسم کی آمدنی پر ٹیکس لگا کرٹیکس کا دائرہ وسیع کرے۔

ہر دفعہ کی طرح اس بار بھی آئی ایم ایف نے پاکستان کو اپنے اثاثے تیزی سے فروخت کرکے نجکاری پروگرام کو شرائط کے مطابق آگے بڑھانے کا مشورے نما حکم بھی دے ڈالا۔

وزیرِخزانہ کا دعوی تھا کہ آئی ایم ایف سے مذاکرات میں کوئی چھوٹ نہیں مانگی، آئی ایم ایف پارٹنر ہے ماسٹرنہیں، پوری توقع ہے کہ جون میں آئی ایم ایف پاکستان کیلئے 50 کروڑ 60 لاکھ ڈالرکی ساتویں قسط جاری کردیگا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں