The news is by your side.

Advertisement

اسرائیلی بربریت کا سلسلہ انیسویں روز بھی جاری

کراچی:اسرائیلی بربریت کا سلسلہ انیسویں روزمیں داخل ہوگیا، آٹھ سو پچاس سے زائد نہتے فلسطینیوں کوموت کےمنہ میں دکھیل کاسرائیل ایک بار پھربارہ گھنٹے کی جنگ بندی کے لئے رضامند ہوگیا،بیت المقدس میں پچاس سال سےکم عمرکےافراد کے داخلے پر پابندی عائد کردی گئی۔

غزہ میں اسرائیل کا خونی کھیل جاری ہے،اٹھارہ روزتک غزہ کو تاراج کرنے کے بعد۔اسرائیل نے آج بارہ گھنٹےکے لیےغزہ پرحملےنہ کرنے کا اعلان کیا ہے،عارضی جنگ بندی کا اعلان اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو نے امریکی وزیرخارجہ سےگفتگو کے بعد کیا، تاہم اس سے قبل صیہونی فوج کی جانب سےغزہ کے پینتالیس مقامات پربمباری کی گئی جس سے تینتیس فلسطینی لقمہ اجل بنے۔

GazaFamilyFlees

دو ہفتے سےجاری اسرائیلی بربریت پررام اللہ میں ہزاروں افراداسرائیل کے خلاف سڑکوں پرنکل آئے،اسرائیلی فوج نے مارچ کرنے والے افراد پرفائرنگ کر دی، جس سے چھ فلسطینی شہید اور دوسو سے زائدزخمی ہو ئے، مظاہرے میں شہید ہونے والے افراد کی نمازہ جنازہ میں ہزاروں افراد نے شرکت کی اوراسرائیل کے خلاف نعرے بازی کی۔

مظاہروں کے بعد اسرائیل نےایک بارپھر روایتی بغض کا مظاہرہ کرتے ہوئے مسجد اقصی میں پچاس سال سےکم عمرکےافراد کے داخلے پرپابندی لگا دی دوسری جانب فلسطین اوراسرائیل کےدرمیان جنگ بندی سےمتعلق اجلاس آج پیرس میں ہورہا ہے، اجلاس میں ترکی قطرامریکا اوربرطانیہ کےوزرائےخارجہ شریک ہوں گے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں