site
stats
اہم ترین

اسرائیل اورحماس کے درمیان تین روزہ جنگ بندی کا آغاز

غزہ: اسرائیل اور حماس کے درمیان تین روزہ جنگ بندی کا آغاز ہوگیا ہے، دوسری جانب غزہ میں اسرائیلی جارحیت کا نشانہ بننے والے فلسطینیوں کی تعداد ایک ہزارنو سو ہوگئی ہے۔

غزہ میں 3دن کی جنگ بندی کا آغاز ہوگیا ہے، 29روز میں اسرائیلی حملوں میں 1900فلسطینی شہید ہوئے، شہداء میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں، انتیس دنوں میں ڈیڑھ ہزارسے زائد نہتے فلسیطنیوں کوسفاکانہ حملوں کا نشانہ بنانے کے بعد اسرائیل نے حماس سے باہترگھنٹوں کے لئے جنگ بندی کرلی۔

جنگ بندی کی تجویز مصر نے پیش کی تھی، اسرائیلی فوجی ذرائع  نے غزہ میں حماس کی سرنگیں تباہ کرنے کا دعوی بھی کیا، جنگ بندی کے آغاز پر اسرائیلی فوج کو غزہ سے واپس بلالیا تاہم اسرائیلی فوجی غزہ کے نواحی علاقوں میں موجود رہیں گے، اسرائیل کے وزیراعظم نتن یاہو نے ایک بار پھرشدت پسندی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کہا کہ غزہ میں سیکورٹی مقاصد حاصل کرنے تک فوجی آپریشن جاری رہے گا۔

امریکا نے جنگ بندی کا خیرمقدم توکیا لیکن اسرائیل کے بجائے حماس کوجنگ بندی قائم رکھنے کی تلقین کی، پیر کے روز ہونے والی جنگ بندی کی اسرائیل نے خود ہی خلاف ورزی کرتے ہوئے غزہ میں بمباری کی اور تین بچوں سمیت تیس فلسطینیوں کو شہید کردیا۔

اسرائیلی حملوں کے جواب میں حماس کی کارروائیوں میں اب تک چونسٹھ اسرائیلی فوجی اورتین شہری ہلاک ہوچکے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top