site
stats
عالمی خبریں

اسرائیل نے مسجد اقصیٰ کو نمازیوں کیلئے مکمل طور پر بند کر دیا

مقبوضہ بیت القدس : اسرائیل نے مسجد اقصیٰ کو نمازیوں کیلئے مکمل طور پر بند کر دیا ہے، اسرائیل نے قبلۂ اول  مسجد اقصیٰ میں مسلمانوں کے داخلے پر پابندی لگاتے ہوئے 1967 کے بعد پہلی مرتبہ یہ اقدام کیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق اسرائیل نے ایک مرتبہ پھر فلسطینیوں میں اشتعال پھیلانے کے لئے مسجد اقصیٰ میں داخلے پر پابندی عائد کردی جبکہ فلسطین کے صدر محمود عباس نے صیہونی حکومت کے اس اقدام کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسرائیل نے مسجد اقصیٰ میں مسلمانوں کے داخلے پر پابندی لگا کر اعلان جنگ کیا ہے جبکہ مقبوضہ بیت المقدس میں شرانگیزی کی ذمہ دار بھی صیہونی ریاست ہے۔

انہوں نے کہا کہ اسرائیل کی جانب سے مسجد اقصیٰ میں مسلمانوں کے داخلے پر پابندی کے نتیجے میں ماحول میں کشیدگی پیدا ہوگئی ہے جبکہ فلسطینی حکومت اسرائیل کے اس اقدام کے خلاف تمام ترقانونی چارہ جوئی کرے گی۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز مسجد اقصیٰ کے قریب فائرنگ کے نتیجے میں ایک یہودی شہری ہلاک ہوگیا تھا۔ جس کے بعد آج صیہونی پولیس نے فائرنگ کر کے ایک فلسطینی کو فائرنگ کر کے شہید کردیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top