اسلام آباد: امام بارگاہ کے خودکش بمبار کے خاکے جاری -
The news is by your side.

Advertisement

اسلام آباد: امام بارگاہ کے خودکش بمبار کے خاکے جاری

اسلام آباد:  قصرسکینہ امام بارگاہ پرحملہ کرنیوالے خودکش بمبار کے خاکے جاری کردیئے گئے۔

قصرسکینہ امام بارگاہ پر حملہ کرنیوالے شخص کے چہرے کی سرجری مکمل کرلی گئی ہے جبکہ پولیس نے امام بارگاہ پر حملہ آور کے تین خاکے جاری کردیئے ہیں۔

تاحال قانون نافذ کرنیوالے ادارے خودکش بمبار کی شناخت سے متعلق کوئی حتمی معلومات فراہم نہیں کرسکے، خودکش حملہ آور کی شناخت کے حوالے سے تحقیقات جاری ہیں۔

امام بارگاہ قصر سکینہ پر ہونے والے دہشتگردی کے حملے کی سی سی ٹی وی فوٹیج اے آروائی نیوز نے حاصل کرلی۔

سی سی ٹی وی فوٹیج میں حملہ آور کو آتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔ حملہ آور گیٹ کے قریب آکرواپس جاتا ہے اور پھرپستول نکال کرفائرنگ شروع کردیتا ہے۔ دہشتگرد کی فائرنگ سے تین افراد جاں بحق ہوئے تھے ۔

خودکش بمبار امام بارگاہ کے اندر داخل ہونے میں کامیاب ہوا مگر اس کی جیکٹ پھٹ نہ سکی ۔

اس سے قبل امام بارگاہ قصر سکینہ پر خودکش حملہ کی کوشش کرنے والے دہشتگرد کی پوسٹ مارٹم رپورٹ تیار کرلی گئی، حملہ آور کی عمر پچیس سے چھبیس سال بتائی جاتی ہے۔

اسلام آباد کے امام بارگاہ قصر سکینہ پر خودکش حملہ کرنے والے دہشتگرد کی لاش پمز اسپتال منتقل کردی گئی، حساس اداروں کی جانب سے پمز اسپتال بھجوائی گئی، خودکش بمبار کی لاش کا پوسٹمارٹم کیا گیا، پوسٹمارٹم کی ٹیم میں سینئر لیگل آفیسر ڈاکٹر شامل ہیں۔

دوسری جانب گزشتہ روز امام بارگاہ قصر سیکنہ پر خودکش حملے کا مقدمہ شہزاد ٹاون تھانے میں درج کرلیا گیا تھا، مقدمہ امام بارگاہ کے متولی زین العابدین کی مدعیت میں درج کیا گیا، مقدمے میں دہشتگردی، قتل ،اقدام قتل سمیت دیگر دفعات شامل کی گئی ہیں ۔

امام بارگاہ حملے کے بعد شہر بھر میں سیکیورٹی ہائی الرٹ ہے پولیس نے غوری ٹاون، اقبال ٹاون سمیت دیگر علاقوں میں سرچ آپریشن کرکے پندرہ مشتبہ افراد کو اسلحہ سمیت گرفتار کرلیا ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز شکریال روڈ پر واقع امام بارگاہ  امام بارگاہ قصر سکینہ میں دھماکہ اور فائرنگ ہوئی، جس کے نتیجے میں 2 افراد جان بحق جبکہ 8 زخمی  ہوگئے۔

خودکش حملہ آور نے امام بارگاہ میں گھسنے کی کوشش کی تاہم وہاں موجود گارڈ نے جان پر کھیلتے ہوئے حملہ آور کو گیٹ پر ہی روک لیا جس پر خودکش حملہ آور نے وہیں خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں