site
stats
انقلاب مارچ

اسلام آباد میں جاری انقلابی دھرنے میں بچی کی پیدائش

اسلام آباد: ڈی چوک پر جاری پاکستان عوامی تحریک کے انقلابی دھرنے میں سجی خیمہ بستی میں انقلاب کے لئے دھرنے میں شریک ایک جوڑے کو بیٹی کے پیدائش کی نوید ملی۔

ننھنی پری کے ماں باپ ثمینہ اور اللہ دتہ دونوں ہی پاکستان عوامی تحریک کے ورکرز ہیں، دونوں کی یادیں اس خیمہ بستی سے اب کچھ زیادہ گہری ہوگئیں ہیں، پہلی بیٹی کے پیدائش پر والدین کی خوشی اس لئے دیدنی ہےکہ ڈاکڑ طاہر القادری نے ناصرف انہیں مبارک باد دی بلکہ خود اپنے ہاتھوں سے بچی کو شہد بھی چٹایا، ڈاکٹر طاہرالقادری نے بچی کو دعاوں سے نوازا اور بچی کا نام کنیز فاطمہ رکھا۔

معصوم کنیز فاطمہ کے والدین کا تعلق سیالکوٹ کی تحصیل پسرور سے ہے، چار اگست کو لاہور سے جلسے میں شرکت کے لئے آنے والے جوڑے کو انقلاب کی جدوجہد کے دوران قدرت نے بیٹی کا تحفہ دیا جسے پاکر دونوں ہی بے حد مسرور ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top