The news is by your side.

Advertisement

اسپنر رضا حسن پر دو سال کی پابندی عائد

لاہور: پی سی بی نے ڈوپ ٹیسٹ مثبت آنے پر انٹرنیشنل اسپنر رضا حسن پر دو سال کی پابندی عائد کردی ہے۔

ایک ون ڈے اور دس ٹی ٹوئنٹی میچز میں پاکستان کی نمائندگی کرنے والے بائیس سالہ نوجوان اسپنررضا حسن کے ڈوپ ٹیسٹ میں مبینہ طور پرکوکین کے اثرات پائے گئے۔

 اسپنر کا ڈوپ ٹیسٹ پازیٹو آنے پر ان کا کیرئیر بھی خطرے میں پڑگیا ہے، پاکستان کرکٹ بورڈ نے رضا حسن پر دو سال تک ہر قسم کی کرکٹ کے دروازے بند کردئیے۔

جنوری میں پینٹنگولر کپ کے دوران رضاحسن کا ڈوپ ٹیسٹ لیا گیا تھا، ٹیسٹ کے لیے اسپنر کا سیمپل بھارت بھجوایاگیا، جو نہ صرف مثبت آیا بلکہ ٹیسٹ میں کوکین کا استعمال بھی ثابت ہوا، جس کے بعد رضاحسن پر دوسال کی پابندی لگائی گئی۔

رضاحسن سے پہلے شعیب اختر،محمد آصف اور عبدالرحمان بھی ڈوپ ٹیسٹ مثبت آنےپرپابندی کا سامنا کرچکے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں