The news is by your side.

Advertisement

اقتصادی رابطہ کمیٹی کا بجلی کی قیمتیں برقرار رکھنے کا فیصلہ

اسلام آباد: بجلی کی قیمتوں میں ملنے والا ریلیف حکومت سے برداشت نہیں ہوا اور اس نے بجلی کے اوسط اور فیول ایڈجسمنٹ کی مد مین ہونے والی کمی عوام تک نہ منتقل کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔

 وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے زیر صدارت اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں وزارت پانی و بجلی کی دو سمریاں پیش کیے جو فورا منظور کرلی گئیں، ان سمریوں کے تحت صارفعین کے اوسط بجلی کے ٹیرف کو موجودہ سطح پر رکھنے کا فیصلہ کیا گیا۔

 نیپرا کی جانب سے صارفعین کے اوسط بجلی کے ٹیرف میں 2 روپے سے لے کر 3 روپے پچاس کمی متوقع تھی، جو اس فیصلے کے بعد نہیں ہوگی، اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ فیول ایڈجسمنٹ کی مد میں ہونے والی کمی اب 300 یونٹس سے کم بجلی استعمال کرنے والے اور زرعی صارفعین کو نہیں ملے گا۔

 وزارت پانی و بجلی کے حکام نے بتایا کہ 300 یونٹس تک بجلی استعمال کرنے والے صارفعین کو بجلی پہلے ہی ریاعتی نرخوں پر مل رہی ہے، حکومت کو ان اقدامات سے بجلی کی سبسڈی کی مد میں 100 ارب روپے کی بچت ہوگی، اجلاس مین رمضان میں چینی پر 3 سے 5 روپے فی کلو سبسڈی دینے اورخریف کی فصل کے لیے ایک لاکھ 50 ہزار ٹن یوریا درآمد کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں