اقوامِ متحدہ نےآثارِ قدیمہ کی تباہی کوداعش کا جنگی جرم قراردے دیا -
The news is by your side.

Advertisement

اقوامِ متحدہ نےآثارِ قدیمہ کی تباہی کوداعش کا جنگی جرم قراردے دیا

 نیویارک: اقوامِ متحدہ کے ثقافتی ادارے یونیسکو نے عراق میں داعش کے ہاتھوں نمرود کے آثارِ قدیمہ کی تباہی کو جنگی جرم قراردیا ہے۔

نمرود کے کھنڈرات کا شمارعراق کے اہم ترین آثارِقدیمہ میں ہوتا ہے۔ شدت پسندنمرود کے تاریخی کھنڈرات کو صحفہ ہستی سے مٹانے کیلئے داعش کے جنگجو بلڈوزراوربھاری مشینری کا استعمال کررہے ہیں۔۔

اقوام متحدہ کے ثقافتی ادارے یونیسکو نے شدت پسندوں کے ہاتھوں آثار قدیمہ کی تباہی کو جنگی جرم کے مترادف قرار دیا ہے ۔۔یونیسکو کے سربراہ کا کہنا ہے کہ شدت پسندوں کا یہ اقدام عراقی عوام پر ایک اور حملہ ہے۔

داعش کے شدت پسندوں نے کچھ عرصہ قبل موصل کے عجائب گھر میں موجود آثارِقدیمہ کے انمول مجسموں کو بھی ہتھوڑوں کی ضربوں سے ریزہ ریزہ کردیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں