site
stats
اہم ترین

الطاف حسین ولی بابر، طارق عظیم اور زہرہ حسین کے قاتل ہیں، شیریں مزاری

اسلام آباد: تحریکِ انصاف کی ترجمان شیریں مزاری نے الزام لگایا ہے کہ الطاف حسین ولی بابر، طارق عظیم اور زہرہ حسین کے قاتل ہیں، الطاف حسین سیاست فلم میں ولن کا اکردار ادا کریں۔

شیریں مزاری کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ الطاف حسین حیران کن طور پر ہر تیسرے ہفتے قیادت چھوڑنے کا اعلان کرتے ہیں، نائن زیرو پر آپریشن کے بعد ٹارگٹ کلنگ میں خاتمہ بڑا اشارہ ہے۔

شیریں مزاری کا کہنا تھا کہ الطاف حسین نے پورے کراچی کو یرغمال بنا رکھا ہے، الطاف حسین نے ذاتی مقاصد کیلئے اردو بولنے والوں کو نقصان پہنچایا، ایم کیو ایم اسٹیٹ کی پارٹی ہے، پی ٹی آئی مقابلہ کریگی۔

اس سے قبل ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے ایم کیو ایم کی قیادت چھوڑنے کا اعلان کردیا اور ذمہ داران سے کہا کہ وہ نیا قائد چن لیں، نائن زیرو پر خطاب کرتے ہو ئے ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نےعمران خان کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔

  الطاف حسین کا کہنا تھا کہ این اے دو سوچھیالیس کا نتیجہ تبدیل کیا گیا تو پاکستان کے اختتام کے دن شروع ہو جائیں گے، عمران خان کے لگائے گئے تمام الزامات غلط ہیں۔

انکا کہنا تھا کہ عمران خان نے الزام لگایا کہ الطاف حسین ولی خان بابر کا قاتل ہے جب کہ وہ ولی بابر کو جانتے تک نہیں تھے۔

ایم کیو ایم کے قائد نے کہا کہ کارکنان کی خاطر25  سال سے جلاوطنی کاٹ رہا ہوں لیکن عمران خان مجھے کہتے ہیں کہ بزدل رہنماء ڈر کر لندن بیٹھا ہے، عمران خان نے دھرنے میں کہا تھا کہ تبدیلی آنے تک گھرنہیں جاؤں گا لیکن شادی کے بعد ان کا انقلاب اور کنٹینر دونوں غائب ہوگئے۔

انھوں نے کہا کہ عمران خان کو اُن کی دو گھنٹے تقریر کرنے پر اعتراض ہے، وہ بتائیں کہ میڈیا نے دھرنوں کی اتنی زیادہ کوریج کیوں کی۔

الطاف حسین نے کہا کہ بنی گالہ کے پاس عمران خان نے پی ٹی آئی کے کارکنوں کو پولیس پر تشدد کرکے چھڑالیا تھا کیونکہ شریف برادران کے بقول عمران خان کے پیچھے فوج کا ہاتھ ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top