الطاف حسین کی خیبر ایجنسی خود کش بم دھماکہ کی مذمت -
The news is by your side.

Advertisement

الطاف حسین کی خیبر ایجنسی خود کش بم دھماکہ کی مذمت

لندن: متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے خیبر ایجنسی کی وادی تیراہ میں خود کش بم دھماکہ کی سخت ترین الفاظ میں مذمت کی ہے اور دھماکہ کے نتیجے میں متعدد افراد کے شہید اور زخمی ہونے پر گہرے دکھ اور افسوس کااظہا رکیا ہے۔

 الطاف حسین نے کہا کہ وادی تیراہ میں خود کش دھماکہ پاک فوج کی جانب سے دہشت گردوں کے خلاف جاری آپریشن ضربِ عضب کا ردعمل ہے، پاک فوج نے آپریشن ضربِ عضب کے نتیجے میں دہشت گردوں اور ان کے متعدد ٹھکانوں کا خاتمہ کیا ۔

انہوں نے کہا کہ وادی تیراہ میں خود کش دھماکہ اس بات کا متقاضی ہے کہ آپریشن ضربِ عضب کو مزید تیز تر کیا جائے اور اسے ملک میں قائم دہشت گردوں کے ٹھکانوں کے مطابق توسیع دی جائے اور ملک بھر سے دہشت گردو ں کا جلد از جلد قلع قمع کرکے عوام کو جا ن ومال کا تحفظ فراہم کیا جائے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ملک میں دہشت گردی کے باعث امن و امان ، معاشی اور اقتصادی صورتحال بد تر ہوتی جارہی ہے ، ملک میں کوئی سرمایہ کار آنے کو تیار نہیں ہے اور دوسرے ممالک کی ٹیمیں پاکستان آنے سے گریزاں ہیں اور یہ صورتحال نازک ترین ہے اور ملک کی بقاء و سلامتی کیلئے سنجیدہ فیصلوں اور حکمت عملی کو اختیار کرنے کا عندیہ دے رہی ہے ۔

انہوں نے خود کش دھماکہ میں شہید ہونے والے افراد کے تمام سوگوار لواحقین سے دلی تعزیت وہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے انہیں صبر کی تلقین اور دعا کی کہ اللہ تعالیٰ شہداء کو جنت الفردوس میں اعلیٰ مقام عطا فرمائے اور زخمیوں کو جلد ومکمل صحت یابی عطا کرے ۔

الطاف حسین نے وفاقی اور صوبائی حکومت خیبر پختونخواہ سے مطالبہ کیا کہ خیبر ایجنسی میں خود کش بم دھماکہ میں ملوث دہشت گردوں کے سرپرستوں کو فی الفور گرفتار کیاجائے اور آپریشن ضربِ عضب کی کامیابی اور دہشت گردوں کے خاتمہ کیلئے تمام ممکنہ ملکی وسائل اور ذرائع استعمال میں لائے جائیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں