site
stats
اہم ترین

القاعدہ کے انکارپرایک کالعدم تنظیم کاطالبان سےگٹھ جوڑ

اسلام آباد: وفاقی وزارتِ داخلہ نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ کالعدم تنظیمیں سزائے موت کے منتظر اپنے قیدیوں کی سزا پرعمل درآمد رکوانا چاہتی ہیں جس کے لئے وہ دہشت گردی کی وارداتیں کرسکتی ہیں۔

وفاقی وزارتِ داخلہ کی طرف سے صوبوں کو لکھے گئے ایک خط میں کہا گیا ہے کہ ایک کالعدم تنظیم نے کارروائیوں کے لیے القاعدہ سے بھی مدد مانگی تھی لیکن انکارہوجانےپراس نے دوسری کالعدم تنظیم سے گٹھ جوڑ کرلیا۔

خط میں کہا گیا ہے کہ کالعدم تنظیم قیدیوں کی رہائی کیلئے عام لوگوں کو یرغمال بھی بنا سکتی ہے۔

وزارتِ داخلہ کا کہنا ہےکہ جنوبی پنجاب کےعلاقےکبیروالا کے رہائشی عبدالرحمان نامی دہشت گرد نے دہشت گردحملوں کی منصوبہ بندی کی ہے ۔

دوسری جانب کرائسز مینجمنٹ سیل نے شہریوں اورسرکاری املاک کی حفاظت کیلئے فوری اورٹھوس اقدامات اٹھانے کی ہدایت کی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top