site
stats
اہم ترین

انتخابات میں جیو نے نواز لیگ کا ساتھ دیا، عمران خان

اسلام آباد: چئرمین تحریک انصاف نے کہا ہے کہ لوگوں کے دل سے بادشاہت کا خوف نکلتاجارہا ہے، روزانہ انکشافات ہورہے ہیں۔

آزادی مارچ کے دھرنے سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ ان کی ٹوئنٹی ٹوئنٹی نہیں ٹیسٹ میچ کھیلنے کی تیاری ہے،جب تک نوازشریف وزیراعظم ہیں، دھرنےسےنہیں اٹھیں گے، صرف پندرہ فیصد الیکشن نتائج آنے پرنوازشریف نے فتح کی تقریرکردی اورریٹرننگ افسروں سےکہاکہ انہیں اکثریت دلائیں، نوازشریف کے رہتے ہوئے انتخابی دھاندلی کی آزاد تحقیقات نہیں ہوسکتی۔

چئرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ انکشاف ہواہےافتخارچودھری اور نجم سیٹھی نے مل کردھاندلی کی۔ دھاندلی کا پردہ چاک کرنے والے الیکشن کمیشن کے سابق اعلیٰ افسرافضل خان کی کردارکشی کی جارہی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ جیسے جیسے اس ملک میں نواز شریف کی بادشاہت کا اثر زائل ہو رہا ہے روزانہ نئے نئے انکشافات سامنے آ رہے ہیں۔اختر مینگل نے سامنے آکر بلوچستان میں ہونے والی دھاندلی کو بے نقاب کر دیا ہے، ہم اس پر ان کا شکریہ ادا کرتے ہیں، دوسری جانب الیکشن کمیشن کے اہلکار جسٹس رضوی نے بھی افضل خان کی جانب سے لگائے گئے الزامات کی تصدیق کر کے یہ حقیقت عیاں کر دی ہے کہ انتخابات میں بد ترین دھاندلی ہوئی تھی۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ کنٹینرزرکھ کرحکومت قانون کی خلاف ورزی کررہی ہے۔ بچے اسکول نہیں جاسکتے۔ انھوں نے کہا کہ شہبازشریف چین چلے گئے،انکا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ میں ہونا چاہیئے تھا۔

عمران خان نے جیو نیوز کے مالک میر شکیل الرحمان کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ یہ انسان پاکستان کے خلاف کام کرتا رہا ہے اور آج بھی پیسے کا پجاری ہے، افضل خان نے دھاندلی کی تصدیق کی تو جیو کی جانب سے ا نکی کردار کشی شروع کر دی گئی، کیونکہ یہ ادارہ خود دھاندلی میں ملوث تھا اور ان کو ڈر ہے کہ اگر تحقیقات ہو گئیں تو یہ بھی پھنس جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ سابق چیف جسٹس افتخار چوہدری نے دھاندلی میں بد ترین کردار ادا کیااور اس کی تصدیق تو جسٹس کیانی نے بھی کر دی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top