The news is by your side.

Advertisement

انڈونیشیا اورملائیشیا کا غیرقانونی تارکین وطن کو پناہ دینے پراتفاق

کوالالمپور: ملائیشیا اورانڈونیشیا نے کشتیوں پر سوارہزاروں غیرقانونی تارکین وطن کوعارضی طور پر پناہ دینے پراتفاق کرلیا ہے جبکہ امریکی حکومت نے ایشین تارکین وطن کی بحالی کے لئے فنڈز جاری کرنے کا فیصلہ کیاہے۔

کوالالمپور میں تھائی لینڈ،ملائیشیا اورانڈونیشیا کے وزرائے خارجہ کا ہنگامی اجلاس ہوا، جس میں اپنی سمندری حدود میں کشتیوں میں محصورغیرملکی تارکینِ وطن کےمعاملے پرغور کیا گیا۔

اجلاس کے بعد ملائیشیا کے وزیرِخارجہ انیفاامان نے میڈیا بریفنگ میں کہا کہ انڈونیشیا اور ملائیشیا نے اس بات پراتفاق کیا ہےکہ سمندر میں پھنسے تقریباً سات ہزار افراد کوعارضی طور پر پناہ دے دی جائے۔

تاہم یہ صرف اس شرط پر ہوگا کہ عالمی برادری ایک سال میں ان غیرقانونی تارکین وطن کی واپسی اوران کی بحالی کا کام مکمل کرے،غیرقانونی تارکین وطن کی اکثریت کا تعلق برما کے روہنگا مسلمانوں اوربنگلہ دیشی باشندوں پرمشتمل ہے۔

دوسری جانب امریکی حکومت کے ترجمان نےایشیا میں غیرقانونی تارکین وطن کی بحالی اورواپسی کےلئےملائیشیا اورانڈونیشا کوحکومتوں کےلئے فنڈزجاری کرنے کا اعلان کیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں