The news is by your side.

Advertisement

آج امام شافعیؒ کا یومِ وفات ہے

آج امام شافعی رحمتہ اللہ علیہ کا بمطابق عیسوی کلینڈر یوم وفات ہے آپ آئمہ اربعہ میں سے ایک ہیں۔
آپ کا نام محمد بن ادریس الشافعی ہے آپ ماہ رجب سال 150ھ بمطابق 768ء میں فلسطین کے شہرغزہ میں پیدا ہوئے۔

آپکے والد مکہ مکرمہ سے ہجرت کرکے فلسطین آگئے تھے، اس کے بعد غزہ و عسقلان میں بھی رہے۔ امام شافعی کی ولادت کے کچھ دنوں بعد ہی ان کے والد کا انتقال ہوگیا تھا، ان کی والدہ ان کو واپس مکہ لے آئیں اور وہیں ان کی علمی تربیت ہوئی۔
آپ اپنے زمانہ کے بہت بڑے عالم اور فقیہ تھے عربی زبان پربڑی قدرت حاصل تھی اور اعلٰی درجہ کے انشاپرداز تھے۔

آپ نے اصولِ فقہ پر سب سے پہلی کتاب ’’الرسالہ‘‘ لکھی ’’الام‘‘ آپ کی دوسری اہم کتاب ہے۔ آپ نے مختلف مکاتب کے افکار و مسائل کو اچھی طرح سمجھا اور پرکھا پھر ان میں سے جو چیز قرآن و سنت کے مطابق پائی اسے قبول کر لیا۔ جس مسئلے میں اختلاف ہوتا تھا اس پر قرآن و سنت کی روشنی میں مدلل بحث کرتے۔ آپ صحیح احادیث کے مل جانے سے قیاس و اجتہاد کو چھوڑ دیتے تھے۔

آج بھی مصر، لبنان، شام اور فلسطین میں شافعی مسلک کے پیروکار موجود ہیں۔

آپ کی عمر کا بیشتر حصہ مکہ، مدینہ، بغداد اور مصر میں گزرا اورآخرکار 204ہجری بمطابق 20 جنوری 820 کو مصرمیں وفات پائی۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں