ایم کیو ایم نےگرفتار کارکن کاشف دیوڈ کےگرفتاری کی تردید کردی -
The news is by your side.

Advertisement

ایم کیو ایم نےگرفتار کارکن کاشف دیوڈ کےگرفتاری کی تردید کردی

کراچی: ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی کا کہنا ہے کہ ثابت ہوگیا آپریشن ایم کیو ایم کو ختم کرنے کے لیے کیا جا رہا ہے،کاشف کی نائن زیرو سے گرفتاری اور اسلحے کا دعویٰ جھوٹا ہے، ایم کیو ایم نے کاشف کے سفری اور ڈی پورٹ کے دستاویزات بھی دکھا دئیے ۔

ایم کیو ایم نے کاشف کی نائن زیرو کے قریب سے گرفتاری اور اسلحےکی برآمدگی کو جھوٹاقرار دے دیا، نائن زیرو پر کاشف کے اہل خانہ کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے رابطہ کمیٹی نے کاشف کے دبئی سے ڈی پورٹ کیے جانے ، پاسپورٹ ، ٹکٹ سمیت پاکستان آمد کے بعد کاشف کی بازیابی کے لیے ایم کیو ایم کی جانب سے ڈی جی رینجرز اور وزیر داخلہ چوہدری نثار کو لکھے جانے والے خطوط اور دستاویزات پیش کر دئیے۔

متحدہ رہنما نے کہا کہ متحدہ کے ایک سو تہتر کارکنوں کو جبری گمشدہ کر دیا گیا ہے،کاشف پر غلط مقدمہ بنایا گیا،کاشف کی اہلیہ کہتی ہیں کہ کاشف کو گذشتہ سال یکم جون میں دبئی سے گرفتار کیا گیا، ملک آمد کے بعد گیارہ ماہ تک کاشف لاپتہ رہے۔

ایم کیو ایم رہنمائوں نے آرمی چیف اور چیف جسٹس سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ جبری گمشدگیوں اور جھوٹےمقدمات کا نوٹس لیتے ہوئے اہل خانہ کو انصاف فراہم کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں