site
stats
اہم ترین

ایم کیو ایم کا وفد آج پھر وزیر اعظم سے ملاقات کرے گا

اسلام آباد:ایم کیو یام کا وفد آج ایک بار پھر وزیر اعظم سے ملاقات کرے گا، وزیر اعظم ہاوس کے مطابق کل کی ملاقات میں ایم کیو ایم نے نئے صوبوں کا معملہ نہیں اٹھایا تھا۔

ایم کیو ایم اور پیپلز پارٹی کے درمیان پیدا ہو نے والی دوریوں کے بعد ایم کیو ایم اور  حکمران جماعت مسلم لیگ سے قربتیں بڑھنے لگی ہے اسی سلسلے میں ایم کیو ایم وفد نے کل وزیر اعظم سے ملاقات کی تھی اور اسی سلسلے کی ایک کڑی کے طور پر ایم کیو ایم کا وفد آج بھی وزیر اعظم سے ملاقات کرنے جارہا ہے۔

ترجمان وزیراعظم ہاوس کے مطابق ایم کیو ایم اور وزیر اعظم کے درمیان ہو نے والی کل کی ملاقات میں ایم کیو ایم کےوفد کی جانب سے نئےصوبے کا معاملہ نہیں اٹھایا۔

ایوان وزیراعظم کے ترجمان کے مطابق گزشتہ روز ایم کیو ایم کے وفد نے ڈاکٹر فاروق ستار کی قیادت میں وزیر اعظم نواز شریف سے ملاقات کی، جس میں اہم قومی امور اور ملکی سیاسی صورتحال پر بات چیت ہوئی۔ ترجمان کا کہنا ہے کہ ان خبروں میں کوئی صداقت نہیں کہ وفد نے وزیر اعظم سے نئے صوبوں کے مسئلہ پر بات کی ہے۔ وزیرا عظم نے ایم کیو ایم کے وفد سے بات چیت میں کہا کہ مسائل کو بات چیت کے ذریعے حل کرنے کی ضرورت ہے، ملک دھرنوں کا متحمل نہیں ہو سکتا ۔

ملاقا ت کے دوران وزیراعظم نواز شریف کا کہنا تھا کہ جمہوری پارٹیوں میں اختلاف رائے موجود رہتا ہے جسے مذاکرات کے ذریعے نظام میں رہتے ہوئے حل کیا جانا چاہئے۔ وزیر اعظم کا مزید کہنا تھا کہ نظام کی بہتری کے لئے جمہوری اداروں کے وقار کا تحفظ ضروری ہے۔

وزیر اعظم نے منتخب جمہوری قوتوں کو متحد رہتے ہوئے ملک کی بہتری اور سلامتی سمیت سندھ میں ترقی کے لئے کام کرنے کی ضرورت پر زور دیا ۔ملاقات میں ایم کیو ایم کی جانب سے رشید گوڈیل اور نسرین جلیل جبکہ حکومت کی جانب سے وفاقی وزیر اطلاعات پرویز رشید،وفاقی وزیر برائے ریلوے خواجہ سعد رفیق اور وزیر اعظم کے پولیٹیکل سیکرٹری آصف کرمانی بھی شریک ہوئے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top