The news is by your side.

Advertisement

ایم کیو ایم کا سندھ حکومت سے علیحدگی کا اعلان

کراچی:  متحدہ قومی مومنٹ نے سندھ حکومت سے علیحدگی کا اعلان کردیا۔

متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی پاکستان اورلندن کا مشترکہ اورہنگامی اجلاس کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایم کیوایم کے رہنماء خالد مقبول صدیقی کا کہنا تھا کہ اگر ہمیں نفرتوں اور انتقام کی سیاست کرنی ہوتی تو پیپلز پارٹی نے ہمیں سو برس کا سامان دے دیا ہے، لیکن الطاف حسین نے پوری قوم کی ہمت کو جگا کر مہاجر قومی مومنٹ کو متحدہ قومی مومنٹ میں تبدیل کردیا گیا۔

خالد مقبول صدیقی نے کہا کہ ماضی میں بھی حیدرآباد میں قتل عام کر کے ہمیں کراچی تک محدود کرنے کی سازش کی گئی، ہم نے اپنے حصے کی قربانی دے دی ہے ، جو کچھ ہم کرسکتے تھے وہ ہم نے کرلیا ہے، الطاف حسین نے نفرتوں کے خلیج کو محبوتوں کے پل بناکر ختم کیااور جب بات ہمارے قائد پر آجائے تو کارکن سمجھوتہ کرنے کو تیار نہیں ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ بھٹو کا وارث بھٹو ہوسکتا ہے ذرداری نہیں ،بلاول بھٹو آپ بمبینو سیمنا کے وارث ہوسکتے ہیں پیپلز پارٹی کے نہیں، بلاول بھٹو نے ہمیں راستہ جدا کرنے پر مجبور کردیا، بلاول کی تقریر کے بعد پیپلز پارٹی کے ساتھ چلنے کا جواز ہی پیدا نہیں ہوسکتا، بلاول کے بیان کے بعد کارکنان ممیں غم وغصہ کی لہر دوڑ گئی ہے ۔

خالد مقبول صیقی نے کہا کہ ایم کیو ایم سندھ حکومت سے علیحدگی کا اعلان کرتی ہے، پاکستان پیپلز پارٹی کا ساتھ سینے کا مقصد ہم جمہوریت کے خلاف ہیں، خورشید شاہ کے بیان پر کسی قسم کا سمجھوتہ نہیں کیا جاسکتا، صوبوں کے مطالبے پر کسی صورت دستبردار نہیں ہوں گے، لفظ مہاجرکوگالی دینےکا انجام ہمارے صوبےکاقیام ہوگا، پریس کانفرنس میں گوزرداری گوکےنعرےلگ گئے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں