بجلی وپانی کی بندش کیخلاف کراچی کے شہری سراپا احتجاج -
The news is by your side.

Advertisement

بجلی وپانی کی بندش کیخلاف کراچی کے شہری سراپا احتجاج

کراچی: شہر کے مختلف علاقوں میں پانی بجلی کی بندش پر شہری بلبلا اٹھے اوراحتجاج کرتے ہوئے سڑکوں پر نکل آئے، بجلی اور پانی کی بندش کیخلاف مکینوں کے احتجاج کا سلسلہ دن بھرجاری رہا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے مختلف علاقوں میں بجلی اور پانی نایاب ہوگئے،جس پرعوام بلبلاکر سڑکوں پر نکل آئے، لسبیلہ میں بجلی عدم فراہمی کے خلاف مکینوں نے شدیداحتجاج کیا۔

مظاہرین نے سڑک بلاک کردی اورکےالیکٹرک کی گاڑیوں کا گھیراؤبھی کیا۔ علاوہ ازیں سات روزقبل لسبیلہ فٹبال گراؤنڈ سے متصل آبادی کی بجلی واجبات کی عدم ادائیگی پر کاٹی گئی جس کی وجہ سے مکینوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔

مظاہرین نے متعلقہ حکام سے مطالبہ کیاہےکہ بجلی بحال کی جائے کیونکہ لوگ بجلی کے بل ادا کرتے ہیں،نیوکراچی میں بھی بجلی اورپانی کی بندش کے خلاف شہریوں نے واٹر بورڈ کے دفترکے باہراحتجاجی مظاہرہ کیا۔

مظاہرین نے مسائل کے فوری حل کا مطالبہ کیا۔اور اپنے مطالبات کے حق میں نعرے بازی کی۔نیوکراچی مشتعل واٹربورڈ اور ٹینکر مافیا کی ملی بھگت کے باعث شہر میں پانی کے مصنوعی بحران کیخلاف شہریوں کے صبر کا پیمانہ لبری ہوگیا۔

بدھ کے روز نیوکراچی میں کئ ماہ سے پانی کی بوند بوند کو ترستے مکینوں نے ناصرف سڑک پر احتجاج کیا بلکہ واٹر بورڈ کے دفتر پر دھاوا بول دیا اور شکایتوں کے انبار لگا دئیے۔

جمشید ٹاون اور سولجر بازار کے مکینوں نے بھی بجلی اور پانی کی بندش کیخلاف لسبیلہ چوک پر احتجاج کیا جس کے نتیجے میں کئی گھنٹوں تک ٹریفک کی روانی معطل رہی۔

بلدیہ اتحاد ٹاون، گلشن معمار اور کورنگی سمیت شہر کے کئی علاقوں میں بجلی کی لوڈشیڈنگ اور پانی کی عدم فراہمی کے خلاف احتجاج کرتے شہریوں کا کہنا ہے کہ اگر مسائل حل نہ ہوئے تو احتجاج کا دائرہ وسیع کیا جائے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں