The news is by your side.

Advertisement

بھارتی وزیرِ داخلہ راج ناتھ سنگھ نے اپنے وزیرِ دفاع کے بیان کی حمایت کردی

نئی دہلی: بھارت کے وزیرِ داخلہ راج ناتھ سنگھ نے اپنے وزیرِ دفاع کے اس بیان کی حمایت کی ہے، جس میں انھوں نے کہا تھا کہ بھارت کو دہشت گردی کے خاتمے کے لیے دہشت گردوں کا استعمال کرنا چاہیے۔


دہشت گردی کا جواب بھی دہشت گردی سے دیا جائے گا، بھارتی وزیرِ دفاع


واضح  رہے کہ  گذشتہ دنوں بھارت کے وزیرِ دفاع منوہر پاریکر نے اپنے بیان میں کہا تھا کہ دہشت گردی کا جواب بھی دہشت گردی سے دیا جائے گا، دہشت گردوں کو ختم کرنے کےلیے دہشت گردوں کو ہی استعمال کرنا چاہیے۔

انھوں نےکہا ’یہ ضروری نہیں ہے کہ دہشت گردوں کوختم کرنے کے لیے ہمیشہ ہمارے فوجی ہی لڑیں۔ ہمیں دہشت گردوں کو مارنے کے لیے دہشت گرد استعمال کرنے چاہيئں۔


مشیر خارجہ سرتاج عزیز کا  بھارتی وزیر دفاع کے بیان پر شدید ردِ عمل


جس کے بعد مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے بھارتی وزیر دفاع منوہرپاریکر کے بیان پر شدید رد عمل کا اظہار کیا ہے۔

اپنے ایک بیان میں سرتاج عزیز کا کہنا تھا کہ بھارت پہلا ملک ہے، جس کے وزیر نے کھلے عام دہشت گردی کی حمایت کی ہے، انکا کہنا تھا کہ پاکستان ہمسایہ ممالک  کے ساتھ بہتر تعلقات کی پالیسی پرعمل پیرا ہے، بھارت کی طرف سے بیان دہشت گردی میں ملوث ہونے کے خدشات کی تصدیق کرتا ہے۔


بھارتی وزیرِ داخلہ کا سرتاج عزیز کے ردِ رعمل کا جواب


اب بھارتی وزیرِ داخلہ راج ناتھ سنگھ نے سرتاج عزیز کے ردِ رعمل کا جواب دیتے ہوئے کہا ہے کہ سب کو معلوم ہے کہ کون دہشت گردی میں ملوث ہے؟

بھارتی وزیرِ داخلہ نے کہا کہ میں پاکستان سے یہ توقع کروں گا کہ وہ دہشت گردی کے خلاف مہم میں بھارت کےساتھ مکمل تعاون کرے گا، خاص طور پران حالات میں جب کہ اب وہ وہ خود دہشت گردی کا شکار ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں