site
stats
پاکستان

بینظیر قتل کیس کے گواہوں کے وارنٹ گرفتاری جاری

راولپنڈی: انسدادِ دہشتگردی کی خصوصی عدالت میں بینظیر قتل کیس میں ایف آئی اے اور پولیس کےافسران سمیت بلاول ہاؤس کے گواہ کے وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے ہیں۔

عدالت نے متعلقہ ڈی پی اوز اور آئی جی بلوچستان کو ان افراد کو گرفتار کرکے عدالت میں پیش کرنے کا حکم جاری کر دیا ہے۔

انسدادِ دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے بے نظیر قتل کیس میں بار بار طلبی پر پیش نہ ہونے پر ایف آئی اے اور پولیس کے دو دو افسران سمیت بلاول ہاوس کے گواہ کے واراٹ گرفتاری جاری کردیئے۔

بے نظیر قتل کیس کی سماعت کے موقع پر ان افسران کے پیش نہ ہونے پر خصوصی عدالت کے جج پرویز اسماعیل جوئیہ نے سخت برہمی کا اظہار کیا ایف آئی اے اور پولیس کے دو دو افسران سمیت بلاول ہاوس کے گواہ کے واراٹ گرفتاری جاری کردیے۔

ان میں ایف آئی اے کراچی کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر خالد جمیل ،ایف آئی اے کراچی کے انسپکٹر نثار جدون ،بلاول ہاوس کراچی کے گواہ عبدالزرق میرانی ،جبکہ ایس پی اشفاق انور راجہ جو کہ جعفرا ٓباد بلوچستان میں بطور ڈی پی او تعینات ہیں جبکہ (ر) ایس ایس پی جاوید خان شامل ہیں۔

فاضل عدالت نے مقدمے کی سماعت 9 فروری تک ملتوی کر دی ہے ۔

واضح رہے کہ اس مقدمے میں سابق فوجی صدر پرویز مشرف اور دو پولیس افسران سمیت آٹھ افراد پر فرد جُرم عائد ہو چکی ہے۔

یاد رہے کہ سابق وزیرِ اعظم بینظیر بھٹو کے 27 دسمبر 2007 کو قتل کیا گیا تھا جس کے  بعد اس مقدمے کی سماعت کو شروع ہوئی اور ب  سات سال ہونے کو ہیں لیکن ملوث ملزمان پر فرد جُرم عائد کیے جانے اور چند گواہوں کے بیانات قلم بند کرنے کے علاوہ کوئی پیش رفت نہیں ہوسکی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top