تعلیم دشمن عناصر ملک کا مستقبل تاریک کرنا چاہتے ہیں، الطاف حسین -
The news is by your side.

Advertisement

تعلیم دشمن عناصر ملک کا مستقبل تاریک کرنا چاہتے ہیں، الطاف حسین

لندن: ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین نے کراچی میں اسکولوں پر کریکر حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ تعلیم دشمن عناصر ملک کا مستقبل تاریک کرنا چاہتے ہیں۔

قائدالطاف حسین نے کراچی میں گلشن اقبال بلاک 7 میں واقع اسکولوں بیکن ہائی اسکول اوربیکن لائٹ اسکول پر دہشت گردوں کی جانب سے دستی بموں کے حملوں کی شدید مذمت کی ہے، الطاف حسین نے کہا کہ پشاورمیں آرمی پبلک اسکول پر طالبان دہشت گردوں کے سفاکانہ حملے اورمعصوم بچوں کے قتلِ عام کے بعد دہشت گردوں کی جانب سے کراچی میں بھی اسکولوں پر دہشت گردوں کے حملوں کا خطرہ تھا لیکن اس کے باوجود بھی صوبائی حکومت کی جانب سے کراچی کے اسکولوں کے تحفظ اور کراچی کے اسکولوں کے معصوم بچوں کو دہشت گردوں کے حملوں سے محفوظ رکھنے کیلئے مناسب اقدامات نہیں کئے گئے اور آج درندہ صفت دہشت گردوں نے گلشن اقبال بلاک 7میں اسکولوں پر دستی بم پھینکے اور باآسانی فرار ہوگئے۔

الطاف حسین نے اسکولوں پر ان حملوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ جو سفاک دہشت گرد اسلام کے نام پر اسکولوں کے معصوم بچوں کو اپنی دہشت گردی کانشانہ بنارہے ہیں وہ نہ اسلام کے دوست ہیں اورنہ ہی مسلمانوں کے بلکہ یہ سفاک عناصر انسانیت کے کھلے دشمن ہیں اوریہ عناصر کسی بھی قسم کی رعایت کے مستحق نہیں ہیں۔

الطاف حسین نے کہا کہ میڈیا پر آنے والی اطلاعات کے مطابق دہشت گردوں نے وہاں داعش کے ہینڈ بل بھی پھینکے ہیں، جوچیخ چیخ کر کراچی میں داعش کی موجودگی کاپتہ دے رہے ہیں لیکن ہمارے حکمران اب بھی حالتِ انکار میں ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اگر خدانخواستہ کراچی کے کسی بھی اسکول پر آرمی پبلک اسکول حملے جیسا کوئی واقعہ ہوا تو حکمراں اس کے ذمہ دارہوں گے، الطاف حسین نے ایک بار پھر حکومت اور تمام قانون نافذ کرنے والے اداروں سے مطالبہ کیا کہ کراچی میں اسکولوں کے تحفظ کیلئے فی الفوراقدامات کئے جائیں، اسکولوں کے اساتذہ کو فی الفوراسلحہ کے لائسنس دیئے جائیں اور ریاستی وسائل کو بروئے کار لاکر ان دہشت گردوں کا قلع قمع کیاجائے۔

الطاف حسین نے بیکن ہائی اسکول اوربیکن لائٹ اسکول اوردیگرقریبی اسکولوں میں زیرتعلیم بچوں ، ان کے والدین اوران اسکولوں کی انتظامیہ سے ہمدردی کا اظہارکرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے آپ کو تنہا نہ سمجھیں، میں اور میرے ساتھی ان کے ساتھ ہیں۔

دوسری جانب ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہےکہ دہشتگردوں کی جانب سے اسکولوں پر حملے نے کراچی کے شہریوں کو شدید تشویش میں مبتلا کر دیا ہے۔

رابطہ کمیٹی نے وزیرِاعظم نواز شریف اور وفاقی وزیرِ داخلہ چوہدری نثار سے مطالبہ کیا کہ وہ اسکولوں پر کریکر حملے کا سنجیدگی سے نوٹس لیں اور کراچی سمیت ملک بھر میں اسکولوں، کالجوں ، یونیورسٹیوں اور دیگر تعلیمی اداروں کے طلبہ کی جان و مال کا تحفظ یقینی بنائیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں