site
stats
سندھ

تھر:غذائی قلت کے شکارمزید دو بچے دم توڑگئے

تھر میں غذائی قلت کا شکار سول اسپتال میں زیر علاج دو بچوں نے آج دم توڑ دیا۔ پینتالیس دن میں جاں بحق بچوں کی تعداد ستاون ہوگئی۔مون سون بارشیں نہ ہوئیں ۔تھر مین قحط سالی نے جیسے یہاں سکونت اختیار کرلی, آئے روز کسی گھر سے خشک سالی سے متاثر بچے کی موت واقع ہوجاتی ہے.

گاوں چیخوں اور بین سے گونج جاتا ہے. لیکن اس گونج سے انتظامیہ اور حکومت کے کانوں میں جوں تک نہیں رینگتی۔ مٹھی کے سول اسپتال میں مزید دو نومولود بچے غذائی قلت کے سبب دم توڑ گئے۔

پینتالیس دن میں جان بحق ہونے والوں کی تعداد ستاون تک پہنچ گئی۔ انتطامیہ نے تھر کےلیے بلند بانگ دعوے کیے لیکن ان دعوؤں کی تکمیل کے لیےتھر کے باسی اب بھی منتظر ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top