site
stats
سندھ

تین مجرموں کے ڈیتھ وارنٹ موصول ہونے کے بعد سکیورٹی سخت

سکھر: کالعدم تنظیم سے تعلق رکھنے والے تین مجرموں کو 13جنوری کو پھانسی گھاٹ میں تختہ دار پر لٹکایا جائے گا ۔

کراچی کی خصوصی عدالت نے کالعدم تنظیم سے تعلق ثابت ہونے پر سینٹرل جیل سکھر میں قید پھانسی کے سزا یافتہ محمد طلحہ، خلیل احمد اور شاہد حنیف کے ڈیتھ وارنٹ جاری کئے تھے، جو جیل انتظامیہ کو موصول ہو چکے ہیں۔

جس کے بعد تینوں مجرموں کو تختہ دار پر لٹکانے کے لئے تیاریاں کر لی گئیں ہیں جبکہ تینوں مجرموں کو 13جنوری صبح ساڑھے 6بجے تختہ دار پر لٹکایا جائے گا۔

اس سلسلے میں جیل انتظامیہ کا کہنا ہے کہ پھانسی گھاٹ کی صفائی ستھرائی کر دی گئی ہے جبکہ سینٹرل جیل سکھر میں فوجی دستے اور ایف سی اہلکار ہائی الرٹ ہیں اور سیکیورٹی اتنہائی سخت کر دی گئی ہے۔

اس سے قبل آج صبح ملتان سینٹرل جیل میں کالعدم تنظیم سے تعلق رکھنے والے دو دہشت گردوں کو تختہ دار پر لٹکا دیا گیا تھا، دونوں مجرموں کو صدرِمملکت کی جانب سے رحم کی اپیلیں مسترد کئے جانے کے بعد ملتان سنیٹرل جیل میں پھانسی کی سزا دی گئی۔

ملتان سنیٹرل جیل میں قید دونوں مجرموں میں سے جھنگ سے تعلق رکھنے والے مجرم احمد علی عرف شیش ناگ کو تین افراد کو قتل کرنے کے جرم میں سزائے موت دی گئی تھی جبکہ غلام شبیر عرف ڈاکٹر کو ڈی ایس پی خانیوال اور ان کے ڈرائیور کے قتل کے جرم میں تختہ دار پر لٹکایا گیا۔

دونوں مجرموں کو پھانسی پر لٹکانے سے پہلے ڈاکٹروں نے طبی معائنہ کیا گیا، پھانسی کے موقع پر سینٹرل جیل میں سکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کيے گئے جيل پر پاک فوج کے دستے تعینات رہے،جلاد صابر مسیح نے دونوں مجرموں کو انکے انجام تک پہنچایا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top