جرائم چھوڑ دو یا ایم کیوایم ،الطاف حسین کی کارکنان کو تنبیہ -
The news is by your side.

Advertisement

جرائم چھوڑ دو یا ایم کیوایم ،الطاف حسین کی کارکنان کو تنبیہ

کراچی: الطاف حسین کہتے ہیں ایم کیو ایم میں کوئی مجرم ہےتوجرائم چھوڑدے یا پارٹی سے الگ ہوجائے جرائم میں ملوث پائے گئے توایم کیوایم عدالت میں پٹیشن نہیں لےجائیگی۔

ایم کیوایم کے مرکز نائن زیرو پر کارکنان سے ٹیلی فونک خطاب کرتے ہوئے الطاف حسین کا کہنا تھا کہ پکڑدھکڑ اور مارا ماری کا یقیناً دکھ اور غم ہمیں بھی ہے لیکن ایم کیو ایم مجرموں کے ساتھ نہیں چل سکتی اس لئے اگر کوئی مجرم ہے تو وہ جرائم چھوڑ دے یا پارٹی،اگر کوئی جرائم کرتے پکڑا گیا تو اس کا جماعت ساتھ نہیں دے گی۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے کچھ لوگوں سے ماضی میں غلطی ہوئیں جس پر انہیں معطل کیا جب کہ غلطیاں کرنے پر کراچی تنظیمی کمیٹی کو بھی تحلیل کیا، اللہ سے دعا ہے کہ غلطیاں کرنے والوں کو معاف کردے۔

یمن کی صورتحال پر الطاف حسین کا کہنا تھا کہ ہمیں یہ نہیں بھولنا چاہیے کہ روس اورامریکہ کی سردجنگ کے دوران ہمارے بعض جید علمائے کرام اور چوٹی کے بعض سیاسی رہنماؤں نے عوام کو اسٹیبلشمنٹ کے طے شدہ منصوبے کے تحت کیا یہ نہیں بتایا تھا کہ روس لادین ملک ہے اور امریکہ اہل کتاب ہے لہٰذا ہمیں لادین کے مقابلے میں بحیثیت مسلمان امریکہ کا ساتھ دینا چاہیے ۔

الطاف حسین نے وزیراعظم میاں محمد نوازشریف سے کہاکہ وہ اس اہم معاملے میں کوئی وقت ضائع کئے بغیر فوری طورپرآل پارٹیز کانفرنس طلب کریں اور وہاں ہر جماعت کو اپنا موٴقف کھل کربیان کرنے کاموقع دیا جائے اور اس کی روشنی میں حکومت فیصلہ کرے کہ موجودہ نازک صورتحال میں پاکستان کو کیا کرنا چاہیے ۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں