site
stats
پاکستان

جھنگ:تریموں ہیڈورکس پر دریائے چناب میں اونچے درجے کا سیلاب

جھنگ : تریموں ہیڈ ورکس پر دریائے چناب میں اونچےدرجے کا سیلابی ریلا گزر رہا ہے، بپھرے دریا نے جھنگ کے نواحی علاقوں میں سیکڑوں بستیوں کا نام و نشان مٹا دیا ہے، ہزاروں افراد پانی میں پھنس کر رہ گئے ہیں۔

پنجاب میں آنے والے سیلابی ریلوں نے سینکڑوں ہستے بستے دیہات صفحہ ہستی سے مٹا دیئے ہیں، موسلادھار بارشیں اور بھارت کی جانب سے اضافی پانی چھوڑے جانے کے بعد دریائے چناب ،راوی اور جہلم ایسے بپھرے کہ پنجاب کے بالائی علاقوں میں تباہی ہی تباہی پھیل گئی۔

دریائے چناب میں چنیوٹ کے مقام پر پانی کا بہاؤ سات لاکھ کیوسک تک پہنچ گیا ہے، سیلابی پانی بوانہ شہر میں داخل ہونے سے زمینی رابطہ منقطع ہوگیا ہے۔ شہری چھتوں پر پناہ لینے پر مجبور ہیں۔

جھنگ کے مقام پر تریموں ہیڈ ورکس پر دریائے چناب میں اونچےدرجے کا سیلاب ہے، انتظامیہ کا کہنا ہے کہ پانی کی سطح میں اضافے کے باعث مزید پندرہ دیہات ڈوب گئے، پکے والا کے قریب ریلوے ٹریک سیلابی پانی میں بہہ گیا، جس سے جھنگ سے پنڈی ریلوے سروس معطل ہوگئی ہے۔

بہاولنگرمیں سیم نالہ ٹوٹنے سے سیلابی پانی نواحی علاقے حسین آباد، سعید پورہ سمیت متعدد بستیوں میں داخل ہوگیا ہے، سینکڑوں ایکٹر زمین زیر آب آگئی ہے، احمد پور سیال میں دریائے راوی میں سیال فقیر کے مقام پر اونچے درجے کے سیلابی ریلے کے باعث پندرہ دیہات زیر آب آگئے ہیں۔

مختلف علاقوں میں ہزاروں افراد اب بھی پانی میں محصور ہیں، پاک فوج ، مقامی پولیس اور ریسکیو کے جوان محصور افراد کو نکالنے میں مصروف ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top