site
stats
پاکستان

حضرت علی کا یوم شہادت، مختلف شہروں میں علم و ذوالجناح کے جلوس

کراچی : خلیفہ چہارم حضرت علی کا یوم شہادت نہایت عقیدت و احترام سے منایا جارہا ہے۔

حضرت علی رضی اللہ عنہ کے یوم شہادت پر ملک کے مختلف شہروں میں علم و ذوالجناح کے جلوس نکالے جا رہے ہیں، عزاداران نوحہ خوانی کرتے ہوئے منزل کی جانب رواں دواں ہیں، مختلف شہروں میں یومِ علی کے جلوس برآمد ہوئے جبکہ کراچی میں مرکزی جلوس شاہ خراسان سے برآمد ہوگا۔

لاہور میں یوم حضرت علی کرم اللہ وجہہ کا مرکزی جلوس اپنے مقررہ راستوں پر رواں دواں ہے۔

جلوس کے راستوں پر سیکورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کئے گئے ہیں، سیکیورٹی خدشات کے پیشِ نظر کئی شہروں میں موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر بھی پابندی عائد ہے، جلوس کی گزرگاہوں کو بم ڈسپوزل اسکواڈ سے کلیئرکرایا گیا ہے۔

جلوس کے اختتام پرمجالس منعقد کی جائیں گی، جس میں علماء و ذاکرین شہادت حضرت علی کے فلسفے پر روشنی ڈالیں گے۔

سکھر ، گوجرانوالہ اور دیگر شہروں میں بھی یوم علی پر جلوس نکالے جارہے ہیں ۔ اس موقع پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ہیں،  شہادت حضرت علی کے سلسلے میں گوجرانوالہ میں سترہ جلوس نکالے جاررہے ہیں، جن کی سیکورٹی کے لیے چار ہزار سے زائد پولیس اہلکار تعینات کیے گئے ہیں ۔

کشمور میں یومِ علی کے موقع پر پانچ ماتمی جلوس برآمد ہوں گے، جلوس کی حفاظت کیلئے دو ہزار پولیس اہلکار تعینات کئے گئے ہیں، جلوس کندھ کوٹ ، کشمور ، گڈو، تنگوانی اور بڈانی سے برآمد ہوں گے، آنے اور جانیوالی گزرگاہوں کو سیل کردیا گیا ہے، جلوسوں کی خفیہ نگرانی کیلئے سات کیمرے نصب کئے گئے ہیں، سندھ بلوچستان اور سندھ پنجاب کے راستوں کو سیل کرکے بھاری نفری تعینات کردی گئی ہے جبکہ کیمرے نصب کئے گئے ہیں۔

سکھر کی مختلف امام بارگاہوں سے بھی جلوس بر آمد ہونگے۔ سیکورٹی کے لیے گیارہ سو پولیس اہلکار تعینات کیئے گئے ہیں جبکہ ڈبل سواری پر پابندی عائد ہے ۔کشمور میں یوم علی کے موقع پر پانچ ماتمی جلوس کندھ کوٹ ،کشمور ،گڈو،تنگوانی اور بڈانی سے برآمد ہوئے ۔ جلوسوں کی حفاظت کیلئے دو ہزار پولیس اہلکارتعینات کئے گئے ۔ہارون آباد میں ماتمی جلوس نکالا گیا اس موقعے پر امام بارگاہوں کے داخلی و خارجی راستوں پر واک تھرو گیٹ نصب کئے گئے۔

شہادت حضرت علی کے سلسلہ میں گوجرانوالہ پولیس نے سکیورٹی کے سخت ترین انتظامات کر رکھے ہیں،  21 رمضان المبارک کو شہادت حضرت علی کے سلسلے میں گوجرانوالہ ضلع میں 17 جلوس نکالے جارہے ہیں ، 50 مجالس ہوں گی ضلع بھر میں افسران سمیت 4385 پولیس اہلکار ڈیوٹی سر انجام دیں رہے ہیں ۔ 67 لیڈی کانسٹیبلان بھی مختلف مقامات پر ڈیوٹی سرانجام دے رہی ہیں، شہر کے داخلی و خارجی راستوں پر سخت ناکہ بندی کی گئی مشکوک افراد کو پکڑنے کے لئے سرچ آپریشن بھی جاری ہے۔

ملتان میں یوم علی کے حوالے سے آج دو بڑے مرکزی جلوس نکالے جائیں گے، اس وقت کینٹ چاہ بورڈ والا کے مقام سے جلوس برآمد ہورہا ہے۔ملتان میں یومِ علی کے موقع پر شہر بھر میں 3280 پولیس اہلکار تعینات ہے، شہر بھر میں دفعہ 144 نافذ جبکہ ڈبل سواری اور اسلحہ کی نمائش پر پابندی ہے

بھکر میں یوم حضرت علی کا مرکزی ماتمی جلوس اما م بارگاہ درِآباد سے برآمد ہوا، جلوس کی سیکیورٹی کے لئے شہر کے داخلی و خارجی راستوں پر ناکہ بندی کی گئی، پیرمحل میں یوم علی کے موقع پر دفعہ144نافذ کر دی گئی۔

اوکاڑہ میں یوم علی کا مرکزی جلوس امام بارگاہ ایوان حسین سے بعد نمازعصربرآمدہوگا۔ ضلع میں سات جلوس نکالے جائیں گے اس موقع سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ہیں، 1700 پولیس اہلکار ڈیوٹی سرانجام دیں گے۔

یومِ علی کے موقع پر ملک بھر کی طرح ٹنڈوالہ یار میں بھی مرکزی جلوس امام بارگاہ حیدری سے برآمد ہوا، مرکزی جلوس اپنے روایتی راستوں سے ہوتا ہوا امام بارگاہ حیدری پر اختتام پذیر ہوا، جلوس کے دوران عزاءداروں نے سینہ کوبی کی اور زوالجناح کی زیارت کی، یوم علی کےمرکزی جلوس کےموقع پر پولیس کی جانب سے سخت سیکیورٹی کے انتظامات کیے گئے، خاردارتاروں سے جلوس کی گزرگاہوں کو سیل کرکے اسنیپ چیکنگ بھی کی گئی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top