site
stats
اہم ترین

حکومتی بے حسی پر خاموش رہنا بھی قومی جرم ہوگا، خالد مقبول صدیقی

کراچی: ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی نے اقوام متحد اور بین الاقوامی این جی اوز سے تھر واسیوں کی مدد کی اپیل کر دی۔ خالد مقبول صدیقی کہتے ہیں کہ تھرپارکر کی صورتحال کی ذمے دار سندھ حکومت ہے، وزیر اعلی محل سے باہر نکلیں ،کرپشن کرنا ہوتی تو عمر بھر سندھ حکومت کا حصہ رہتے۔

تھر پارکر میں حالات کی سنگینی اور الطاف حسین کی ہدایت پر تھرمیں امدادی کارروائیاں مستقل جاری رکھنے کے عزم کے اظہار سمیت پریس کانفرنس میں ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی سندھ حکومت پر برس بھی پڑے اور صوبائی حکومت کو تھرپارکر کی صورتحال کا ذمہ دار قراردیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومتی بے حسی پر خاموش رہنا بھی قومی جرم ہوگا، وزیراعلی کی نااہلی اور حکومت کی کرپشن نے صحراء کے باسیوں کو موت کے منہ میں دھکیل دیا۔

انہوں نے وزیراعظم سے فوری طور پر خصوصی پیکجج کے اعلان کا مطالبہ بھی کیا، خالد مقبول صدیقی نے کہا کہ ایم کیو ایم تھر کی صورتحال پر سیاست نہیں کر رہی۔

متحدہ رہنمائوں کا کہنا تھا کہ الطاف حسین نے ہدایت کی ہے کہ امدادی کارروائیاں مستقل بنیادوں پر جاری رہیں گی، انہوں نے اقوام متحدہ اور عالمی این جی اوز سے بھی امداد کی اپیل کی، خالد مقبول صدیقی نے بتایا کہ ایک کروڑ سے زائد کی امدادی اشیاء متاثرہ علاقوں میں بھجوائی جا چکی ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top