حکومت کا بینکوں سے گیارہ سو تیس ارب روپے قرضہ لینے کا فیصلہ -
The news is by your side.

Advertisement

حکومت کا بینکوں سے گیارہ سو تیس ارب روپے قرضہ لینے کا فیصلہ

کراچی: حکومت کی جانب سے بینکوں سےگیارہ سو تیس ارب روپےقرض لینےکا فیصلہ کیا گیا ہے۔ یہ قرض نومبر سےجنوری کےدوران بجٹ خسارہ پورا کرنےکیلئےلیاجائیگا۔

اسٹیٹ بینک نےتین سے دس سالہ مدت کے نو سو اسسی ارب روپےکے پاکستان سرمایہ کاری بانڈز بینکوں کو فروخت کرنےکاہدف رکھا ہے جبکہ تین سےبارہ ماہ کی مدت کے ایک سو پچاس ارب روپےکےمارکیٹ ٹریژری بلز بھی بینکوں کو فروخت کرنےکاہدف مقررکیاگیاہے۔

مذکرہ بانڈز اور ٹی بلز پندرہ نومبر سےپندرہ جنوری کےدوران فروخت کئےجائینگے۔ حکومت حاصل شدہ آمدنی سےپچھلےقرضوں کی ادائیگی اوربجٹ خسارہ پوراکرے گی۔

اسٹیٹ بینک کی جانب سے پی آئی بیز اور مارکیٹ ٹریژری بلز کی فروخت کا ہدف مقرر کرلیا گیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں