The news is by your side.

Advertisement

حکومت کا کے الیکٹرک سے معاہدےکی توسیع نہ کرنے کاعندیہ

اسلام آباد: وزارت پانی و بجلی کی جانب سے کے الیکٹرک سے معاہدے کی تجدید نہ کرنے کا عندیہ دے دیا گیا۔ رواں سال موسم گرما میں آٹھ سے دس گھنٹے لوڈ شیڈنگ کی پیش گوئی کردی۔

وزارت پانی وبجلی ذرائع کے مطابق کے الیکٹرک اپنے کوٹے سے زائد بجلی وفاق سے لے رہا ہے، کے الیکٹرک کے ساتھ ساڑھے چھ سومیگاواٹ بجلی کا کوٹہ کی فراہمی کا معاہدہ چھبیس جنوری کو ختم ہورہا ہے۔

ذرائع کے مطابق وزارت پانی وبجلی کی کوشش ہے کہ اس معاہدے کی تجدید نہ کی جائے۔ وزارت پانی و بجلی کے مطابق توانائی کے شعبے زیر گردش قرضوں کا حجم تین سو ارب روپے تک پہنچ گیا ہے۔

پی ایس او کے پاس خام تیل کا دس دن کا ذخیرہ ہے جس کے باعث پی ایس او کو فوری طور پر پچاس سے سو ارب روپے کی اشد ضرورت ہے ۔

اس وقت ملک میں بجلی کا شارٹ فال پانچ ہزارمیگاواٹ ہوگیا ہے۔موسم گرما میں شہروں میں اعلانیہ لودشیڈنگ کا دورانیہ آٹھ گھنٹے اور دیہات میں دس گھنٹے ہونے کا امکان ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں