حیدرآباد: وفاقی وزیر عابد شیر علی کی کھلی کچہری میں بد نظمی -
The news is by your side.

Advertisement

حیدرآباد: وفاقی وزیر عابد شیر علی کی کھلی کچہری میں بد نظمی

حیدرآباد: حیدرآباد میں پانی و بجلی کے وزیر عابد شیر علی نے عوام کے مسائل سننے کے لئے کھلی کچہری لگائی مگر جب کچہری شروع ہو ئی تو شور اور بدنظمی کا شکار ہوگئی۔ وفاقی وزیر نے واپس جانے میں ہی عافیت جانی۔

تفصیلات کے مطابق حیدرآباد میں وفاقی وزیر عابد شیر علی نے عوامی مسائل کو سننے کیلئے کھلی کچہری لگائی تھی ۔ وفاقی وزیر آئے تو عوامی مسائل سننے کے لئے تھے تاہم عوام انہیں سننے کے لئے تیار نہیں تھی۔ بے بناہ بد نظمی کے باعث تنگ آکر عابد شیر علی کچہری سے جانے لگے تاہم کچھ خیال آیا اور واپس پنڈال میں آگئے۔

سائلین نے بجلی کے بلوں پر ایسی بھڑاس نکالی کہ وزیر کو کھری کھری سنا دیں۔  عابد شیر علی نے یقین دلایا، سمجھایا اور حکم نامے بھی جاری کئے تاہم سائلین نا مانوں کی رٹ لگاتے رہے۔

عابد شیر بجلی کو سائلین اضافی بلوں اور علاقائی نمائندوں کے ہاتھوں رشوت سے تنگی کی شکایت بھی سناتے رہے اور اس حوالے سے دی جانے والی تسلیوں پر وفاقی وزیر پر برستے بھی رہے۔  کھلی کچھری میں عابد شیر علی کی پریشانی کے ساتھ شوراور بدنظمی بھی عروج پر رہی جو کہ دیدنی تھی۔

اس موقع پر سائلین گو نواز گو کے نعرے بھی لگاتے رہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں