The news is by your side.

Advertisement

خودکش بمبار نے دھماکے کا طریقہ بدل لیا

اسلام آباد: خود کش حملہ آوروں نے واردات کا طریقہ کار تبدیل کرلیا ہے، شواہد مل جانے کے باوجود تفتیشی حکام کو شناخت میں شدید مشکلات پیش آنے لگیں۔

خود کش بمباروں نے خود کو اڑانے کا انداز بدل لیا، شناخت سے بچنے کیلئے اب خودکش حملہ آور سیدھا کھڑا ہوکر خود کو دھماکے سے نہیں اڑاتا، بلکہ اپنے جسم کو نصف جکھا کر دونوں بازو پیٹ میں رکھ کر خود کو دھماکے سے اڑاتا ہے۔

حملہ آوروں کے اس طریقہ کار سے تن سے جدا ہونے سر مکمل طور پر چھیتڑے بن کراڑ جاتا ہے جبکہ انگلیوں کے نشانات بھی شناخت معلوم کے قابل نہیں رہتے۔

واہگہ بارڈر اور لاہور پولیس لائنز میں ہونے والے حملوں میں خود کش بمبار وں نے یہی اندازاختیار کیا۔

دہشتگردوں کے نئے طریقہ کار سے تفتیشی ٹیم کوخود کش حملہ آور کے بال یاکھال کا کچھ حصہ ہی مل پاتا ہے، جس کے ڈی این اے ٹیسٹ سے صرف دہشتگرد کی نسل کا معلوم ہوسکتا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں