The news is by your side.

Advertisement

دنیا کا خوش قسمت ترین انسان موت کی کھائی سے زندہ نکل آیا

کولمبو: سری لنکا کی افواج نے خطرناک ترین سیاحتی مقام پرمصیبت میں مبتلاہونے والے نوبیاہتا ڈچ جوڑے کو ریسکیو آپریشن میں بچالیا۔

دنیا کا آخری کونا کہلانے والاپرخطرسیاحتی مقام دنیا بھرکے سیاحو ں کے لئے انتہائی پرکشش ہے لیکن انتہائی خطرناک بھی۔ یہ ایک 4000فٹ گہری کھائی کا کنارہ ہے اورسری لنکن ملٹری حکام کے مطابق اس میں گرنے والا کوئی بھی شخص آج تک زندہ واپس نہیں نکلا۔

نیدرلینڈ سے تعلق رکھنے والا نوجوان جوڑا اپنے ہنی مون پرسری لنکا کے مشہورترین سیاحتی مقام کی سیاحت میں مصروف تھا کہ 35 سالہ دولہا اپنی نئی نویلی دلہن کی تصویر لینے کے لئے چند قدم پیچھے ہٹااورپیررپٹنے کے سبب ہزاروں فٹ گہری کھائی میں جا گرا۔

سری لنکن آرمی کے ترجمان بریگیڈیئرجیاناتھ نے فرانسیسی خبررساں ایجنسی کو بتایا کہ،’’ گرنے والا شخص انتہائی خوش قسمت تھا کہ وہ ایک درخت کے اوپری حصے پرگرا۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ دنیا کا پہلا کا شخص ہے جو چارہزارفٹ گہری اس خطرناک کھائی سے زندہ باہرآیا ہے۔

سری لنکن آرمی کے چالیس جوانوں نے اس آپریشن میں حصہ لیا ہے جو کہ رسیوں کی مدد سے کھائی میں اترے اورانہوں نے متاثرہ شخص کو پانچ کلومیٹرتک کاندھوں پراٹھا کر قریبی مقام تک پہنچایاجہاں سے اسے ملٹری ہیلی کاپٹر کے ذریعے اسپتال منتقل کیا گیا۔

اسپتال ذرائع کے مطابق زخمی شخص کی حالت خطرے سے باہرہے۔

دنیا کا آخری کونہ کہلانے والی یہ کھائی وسطی سری لنکا میں ہارٹن نامی پہاڑی سلسلے کا مقبول ترین سیاحتی مقام ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں