دہشت گردوں کی تعداد اتنی نہیں، جتنے ماردیئے گئے ہیں، فضل الرحمان -
The news is by your side.

Advertisement

دہشت گردوں کی تعداد اتنی نہیں، جتنے ماردیئے گئے ہیں، فضل الرحمان

اسلام آباد: اسلام آباد میں گرینڈ قبائلی جرگہ میں مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے لوگوں کو انصاف فراہم کرنا ریاست کی ذمہ داری ہے۔

اسلام آباد میں جاری گرینڈ جرگے سے خطاب کر تے ہو ئے مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ روزانہ مارے جانے والے دہشت گردوں کی ہلاکتوں کا شمارکیا جائےتویہ تعداد ملک میں موجود دہشت گردوں کی تعداد سے بھی زیادہ ہوگئی ہے۔ انھوں نے کہا کہ لوگوں کو انصاف فراہم کرنا ریاست کی ذمی داری ہے۔

جمعیت علمائے اسلام کے امیر مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ ریاست کو اسکی ذمہ داری کااحساس دلانا چاہتے ہیں کہ لوگوں کو عدل فراہم کرنا اس کا فرض ہے۔ اسلام آباد میں قبائلی جرگےسے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ ملک میں آگ بجھائی جارہی ہے پانی نہیں بلکہ تیل ڈال کر۔

جرگے سے خطاب کرتے ہوئے ایم کیو ایم کے رہنما حیدر عباس رضوی کا کہنا تھا کہ جتنا مشکل وقت آج پختون قوم پر ہے پہلے شاید کبھی نہیں رہا۔ عوامی نیشنل پارٹی کےسربراہ اسفند یار ولی کاکہناتھاکہ فاٹاکی حیثیت سے متعلق جو بھی فیصلہ ہو گا وہ فاٹا کے عوام کریں گے کوئی دوسری قوت نہیں۔ قومی وطن پارٹی کے سربراہ آفتاب شیر پاو نے کہا کہ آئی ڈی پیز اہم ترین قومی مسئلہ ہیں اس پر توجہ دینا ہوگی۔ ٓ

آفتاب شیر پاو نے جرگے سے خطاب کرتے ہوئے سیاسی و مذہبی جماعتوں کے رہنماؤں نے حکومت پر زور دیا کہ آئی ڈی پیز کے مسئلے کو ترجیحات میں سرفہرست رکھا جائے ۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں