The news is by your side.

Advertisement

زرعی پانی کی قلت:وزیراعلیٰ سندھ نے نوٹس لے لیا

جھڈو :زرعی پانی کی قلت اور پانی چوری کی شکایات پر وزیراعلیٰ سندھ کا اچانک مٹھڑائو کینال نوکوٹ کا دورہ ،بند کمرے میں محکمہ آبپاشی کے افسران اور منتخب نمائندو ں کے ہمرا اجلاس کسی بھی زمیندار کو اجلاس میں نہیں بلایا گیا،علاقہ کے زمینداروں کا پانی چوری اور کمی کے خلاف احتجاج ،

اطلاعات کے مطابق زرعی پانی کی کمی اور چوری کی خبریں مختلف قومی اخبارات میں شایع ہونے پر وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے نوٹس لیتے ہوئے نوکوٹ مٹھڑائو کینال کا اچانک دورہ کیا اور سینٹر گل محمد لاٹ کی تھر فلور ملز پر بند کمرے میں آبپاشی کے افسران اور منتخب نمائندوں کے ساتھ اجلاس کیا بعد ازا صحافیوں سے گفتگو کر تے ہوئے وزیر اعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ پانی کی کمی نہیں ہے لیکن آبپاشی انتظامیہ اور پولیس کی نا اہلی اور غفلت کے باعث پانی کی تقسیم درست طرح سے نہیں ہو پا رہی ہے اور ہم پانی کو ٹیل تک پہنچائیں گےy.جمڑائو اور مٹھڑائو کینال کے سلسلے میں ہم نے کا فی پیسے دیئے ہیں

اس موقع پر وزیر اعلیٰ سندھ کا مذید کہنا تھا کہ پولیس سے عوام کا اعتماد اٹھ چکا ہے لیکن ہم پولیس سے کام لیں گے رینجرز کراچی حیدرآباد میں بہت اچھا کام کر رہی ہے رینجرز کو پا نی کی چوکیداری پر نہیں لگا سکتے اس موقع پر زمینداروں نے شدید احتجاج کر تے ہو ئے کہا کہ وزیر اعلیٰ سندھ بند کمرے میں پانی چوروں کے ساتھ اجلاس کر رہے ہیں جبکہ ہماری زمینیں تباہ ہو رہی ہیں اور وزیر اعلیٰ یہاں کے چور ایم این اے ایم پی ایز نے وزیر اعلیٰ کو ہم سے ملنے نہیں دیا جبکہ وزیر اعلیٰ سندھ سے صحافی کی جانب سے ایم این اے ایم پی اے کے پانی چوری میں ملوث ہو نے کے بارے میں سوال کر نے پر جیالے صحافیوں پر بھڑک اٹھے اور وزیر اعلیٰ سے سوالات کر نے سے روک دیا جس پر صحافیوں نے شدید احتجاج کیا

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں