site
stats
اہم ترین

زمیندار نے کمسن بچے کے ہاتھ کاٹ دئے

گجرات: معمولی تنازعے پر بے رحم اور سفاک زمیندار نے دس سالہ معصوم بچے کے دونوں بازو قطع کردئے۔

تفصیلات کے مطابق یہ دلخراش واقعہ گجرات کے نواحی گاؤں چک بھولا میں پیش آیا جہاں ایک مقامی زمیندار جس کی شناخت غلام مرتضیٰ عرف نومی کے نام سے ہوئی ہے، اس نے انتہائی بے رحمی سے دس سالہ معصوم بچے کے بازو گھاس کترنے کی مشین میں ڈال کر قطع کردئے۔

بچے کی ماں نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ ان کی تو کسی سے کسی بھی قسم کی کوئی دشمنی بھی نہیں تھی نجانے کیوں اس ظالم شخص نے انکے بچے کی زندگی برباد کردی۔

دوسری جانب فسوس ناک امر یہ ہے کہ پولیس کی جانب سے انتہائی نوعیت کے حامل اس اہم واقعے میں کسی خاص ردعمل کا اظہار نہیں کیا گیا ہے اور زمیندار کو گرفتار کرنے کے باوجود تاحال نہ تو ایف آئی آر درج کی گئی ہے اور نہ ہی قانونی کاروائی کا آگاز کیا گیا ہے۔

مزید برآں اس مظلوم بچے کی بدنصیبی کہ جب اس کو طبی امداد کے لئے اسپتال منتقل کیا گیا تو اس کو طبی امداد دینے کے لئے کوئی بھی موجود نہیں اور وہ معصوم بچہ تکلیف سے تڑپتا رہا۔

پاکستان تحریک ِ انصاف کے رہنما اور پنجاب اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر میاں محمود الرشید نے کہا ہے اس طرح کے واقعات میں ملوث ملزمان کو جلد اور عبرت ناک سزا دینی چاہئے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top