The news is by your side.

Advertisement

سائنسدان انفارمیشن ڈیٹا کی منتقلی کا نظام روشنی سے کرنے میں کامیاب

مسلسل کوششوں اور کئی تجربات کے بعد سائنسدان انفارمیشن ڈیٹا کی منتقلی کا نظام روشنی سے کرنے میں کامیاب ہوگئے ۔

سائنسدانوں نے ایسی چپ بنالی ہے جس نے کوانٹم کمپیوٹر کی نئی طاقتور نسل کیلئے راستے کھول دیئے ہیں، اس سے انتہائی جدید کمپیوٹر بنائے جاسکتے ہیں جس کے ذریعے پیچیدہ حساب کتاب سمیت وہ سارے کام کیے جاسکیں گے جو اس وقت کمپیوٹر کے ذریعے ممکن نہیں،موجودہ کمپیوٹر روایتی بٹس استعمال ہوتی ہیں نئے کمپیوٹر میں کوانٹم بائٹ یا کیو بٹ کا استعمال ہوگا جس کی وجہ سے یہ کمپیوٹر زیادہ تیزی کیساتھ بہت سی انفارمیشن محفوظ رکھنے اور پراسیس کرنے کے ہونگے۔

اس ٹیکنک میں روشنی کے دو یکساں ذرات فوٹونز سلیکون کی چپ موجودسرکٹس کے نیٹ ورکس پر ایک ساتھ گردش کریں گے جسے کوانٹم اک کا نام دیا گیا ہے۔ نئے کمپیوٹرز کے ذریعے سائنس کی وہ گھتیاں سلجھ سکیں گی جو اب تک بے حد پیچیدہ سمجھی جاتی ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں