The news is by your side.

Advertisement

سانحہ ماڈل ٹاون:ایف آئی آرکاٹنے کے حکم پرعملدرآمد کی درخواست مسترد

لاہور: لاہور ہائی کورٹ نے سانحہ ماڈل ٹاؤن پر سیشن عدالت کی جانب سے مقدمہ درج کرنے کے حکم پر فوری عمل درآمد کے لیے دائر درخواست اعتراض لگا کر مسترد کر دی۔

جسٹس محمد امیر بھٹی نے کیس کی سماعت کی،  درخواست گزار شیراز ذکاء ایڈووکیٹ نے دلائل دیئے کہ سیشن عدالت نے وزیراعظم ، وزیراعلی ، پرویز رشید ، رانا ثنااللہ ، خواجہ سعد رفیق ، خواجہ آصف اور چوہدری نثار سمیت اعلی حکومتی شخصیات اور پولیس افسران کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دیا مگر پولیس نے ابھی تک اس پر عمل نہیں کیا جو نہ صرف قانون کی خلاف ورزی ہے بلکہ توہین عدالت کے زمرے میں آتا ہے ۔

درخواست گزار کے مطابق سانحہ ماڈل ٹاؤن ایک قومی المیہ ہے، جس پر ہر شہری مقدمہ درج کروا سکتا ہے ۔

ہائی کورٹ آفس کی جانب سے درخواست پر اعتراض عائد کیا گیا کہ درخواست گزار متاثرہ فریق نہیں کیونکہ ان کا جاں بحق یا زخمی ہونے والوں سے کوئی خونی رشتہ نہیں، اس لیے وہ درخواست دائر نہیں کرسکتے ۔

عدالت نے ہائی کورٹ آفس کا اعتراض برقرار رکھتے ہوئے درخواست کو ناقابل سماعت قرار دے دیا۔

دوسری جانب لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس مامون نے سانحہ ماڈل ٹاؤن کی انکوائری سپریم کورٹ سے کرانے کی درخواست کی سماعت سے معذرت کرلی اور معاملہ چیف جسٹس ہائیکورٹ کو بھجوا دیا، جسٹس مامون کا کہنا ہے وہ ذاتی وجوہات کی بنا پرسماعت نہیں کرسکتے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں