site
stats
اہم ترین

سانحہ واہگہ بارڈر کے لئے مشترکہ تحقیقاتی ٹیم تشکیل

لاہور: وزیرِاعلیٰ پنجاب شہبازشریف کی ہدایت پرسانحہ واہگہ کے لئے مشترکہ تحقیقاتی ٹیم تشکیل دے دی گئی۔۔ واہگہ بارڈر کی پارکنگ سے برآمد ہونے والابم اور خودکش جیکٹ ناکارہ بنا دیئے گئے ہیں، دوسری جانب سانحہ واہگہ کی ابتدائی رپورٹ وزیرِاعلیٰ پنجاب کو پیش کردی گئی ہے۔

سانحہ واہگہ بارڈرسے متعلق تحقیقات جاری ہیں، سرچ آپریشن کے دوران دہشت گردی کی دوکوششں ناکام بنادیں گئی، واہگہ بارڈر کی پارکنگ سے برآمد ہونے والے آئی ای ڈی بم کوبی ڈی ایس نے ناکارہ  بنادیا گیا جبکہ دس کلو بارود اور بیرنگ سے بھری ایک خودکش جیکٹ بھی برآمد ہوئی، جسے ناکارہ بناکرفرانزک ٹیسٹ کے لئے بھجوادیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق جیکٹ پر پشتو میں شہادت مبارک لکھا ہوا ہے۔

رینجرز نے رات گئے واہگہ بارڈ کے سرحدی دیہاتوں میں سرچ آپریشن کے دوران سات مشکوک افراد کو حراست میں لیکر تفتیش کے لیے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا تھا، تحقیقاتی ٹیموں نے جائے حادثہ کا دورے میں اہم شواہد اکھٹے کئے، خودکش حملہ آور کے جسم کے اعضا ڈی این اے ٹیسٹ کے لیے بھجوا دیئے گئے ہیں۔

سانحہ واہگہ کی ابتدائی رپورٹ وزیرِاعلیٰ پنجاب کو پیش کردی گئی، ابتدائی پوسٹ مارٹم کے مطابق جاں بحق ہونے والے افراد کے جسم میں بال بیرنگ اور نٹ بولٹ لگے، حملے کی ذمہ داردی تین کالعدم تنظیموں نے قبول کی تھی ، سانحہ کی مزید تفتیش جاری ہے جبکہ واہگہ کےاطراف علاقوں میں سیکیورٹی مزید سخت کردی گئی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top