سانحہ پشاور کے بعد20کو پھانسی1800سے زائد گرفتار، رپورٹ -
The news is by your side.

Advertisement

سانحہ پشاور کے بعد20کو پھانسی1800سے زائد گرفتار، رپورٹ

اسلام آباد: سانحہ پشاور کے بعد قومی ایکشن پلان پر عملدرآمد رپورٹ جاری کردی گئی، جس کے مطابق ملک بھر سے اٹھارہ سو افراد گرفتار اور بیس دہشتگردوں کو پھانسی دی گئی ہے۔

سانحہ پشاور کے بعد ملک بھر میں دہشتگردوں کیخلاف گرینڈ ایکشن لانچ کردیا گیا ہے، قومی ایکشن پلان سے متعلق جاری کردہ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ایک ماہ میں ملک بھر میں قانون نافذ کرنے والے اداروں نے سات ہزار تین سو انیس سرچ آپریشنز کئے، جس میں اٹھارہ سو زائد افراد کو گرفتار کیا گیا۔

سب سے زیادہ گرفتاریاں پنجاب سے عمل میں آئیں، جہاں نوسو اٹھاون افراد کو حراست میں لیا گیا، سندھ میں یہ تعداد دوسوچوالیس رہی، خیبرپختونخوا میں دو سو چونتیس ، بلوچستان میں ایک سو اٹھاسی اور اسلام آباد میں دو سو پینتیس افراد پابند سلاسل کئے گئے۔

اس کے علاوہ قومی ایکشن پلان پر عملدر آمد کرتے ہوئے مذہبی منافرت پھیلانے والوں کے خلاف بھی کارروائیاں کی گئیں ۔۔

پنجاب اور خیبر پختون خوا میں لاؤڈ اسپیکر کا غلط استعمال کرتے ہوئے نفرت انگیز تقاریر کرنے پر تین سو انتالیس افراد کو سلاخوں کے پیچھے ڈال دیا گیا۔

سانحہ پشاور کے بعد سزائے موت پر عائد پابندی اٹھائی گئی تو بیس دہشتگرد تختہ دار پر لٹکا دیئے گئے، پنجاب میں چودہ دہشتگردوں کو انجام تک پہنچایا گیا، سندھ میں پانچ،اور خیبر پختون خوا میں ایک دہشتگرد سولی پر چڑھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں