The news is by your side.

Advertisement

سانحہ کراچی اور سبین محمود کے قتل کے ماسٹر مائنڈ کو گرفتارکرلیا، وزیراعلیٰ سندھ

کراچی :  وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے سانحہ کراچی میں ملوث ملزمان کی گرفتاری ظاہر کردی، تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ  سید قائم علی شاہ نے کہا ہے کہ سانحہ کراچی اور سبین محمود کے قتل کا ماسٹر مائنڈ کو گرفتار کر لیا گیا ہے، دہشت گردوں کا گروپ پولیس اہلکاروں کی ٹارگٹ کلنگ میں بھی ملوث ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے کراچی میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا، پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ گرفتار ملزمان نے سانحہ صفورا اور سبین محمود کے قتل کا اعتراف کیا ہے، اور اس کے علاوہ ملزمان نے امریکی شہری ڈیبرا لوبو کو بھی فائرنگ کا نشانہ بنا کر زخمی کیا تھا۔

اہم پریس کانفرنس سے خطاب میں ان کا کہنا تھا کہ سبین محمود پر حافظ ناصر گروپ نے فائرنگ کی تھی جبکہ قتل کا ماسٹر مائنڈ سعد عزیز ہے اور ایک ملزم الیکٹرونکس انجینئر ہے۔

وزیراعلیٰ سندھ کاکہنا ہے کہ کراچی میں حال میں ہونے والے بڑے دہشت گردی کے واقعات کے پیچھے گرفتار ملزمان کو گروہ سرگرم تھا ۔

وزیراعلیٰ ہاؤس میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیراعلیٰ سندھ نے بتایا کہ سندھ پولیس کے کاؤنٹر ٹیریرزم ڈپارٹمنٹ نے دن رات کی انتھک محنت کے بعد سانحہ کراچی میں ملوث مرکزی ملزم کو دیگر تین ساتھیوں سمیت گرفتار کرلیا ہے ۔

وزیراعلیٰ سندھ کاکہنا تھا کہ سانحہ کا مرکزی ملزم طاہر حسین منہاس عرف سائیں نذیر 1998 سے دہشت گردی کی کارروائیوں میں ملوث رہا ہے، جبکہ دیگر تین ساتھی سعد عزیز عرف جان، محمد اظہر عشرت عرف ماجد، ناصر عرف یاسر بھی مختلف وارداتوں میں ملوث رہے ہیں۔

تینوں ملزمان کراچی کی بڑی جامعات سے فارغ التحصیل ہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ نے بتایا کہ حال ہی میں فائرنگ سے جاں بحق ہونے والی سماجی کارکن سبین محمود کے قتل اورامریکی ڈاکٹر ڈیبرالوبو پر حملے میں بھی گرفتار ملزمان ملوث ہیں۔

گرفتار ملزمان نے دوران تفتیش نیول افسر پر مینگیٹ بم ، رینجرز کے بریگیڈیر پر خود کش حملہ ، ناظم آباد اور نارتھ ناظم آباداسکول حملوں، آرام باغ، بہادر آباد ، نارتھ ناظم آباد میں بوہری کمیونٹی پر بم حملوں میں بھی ملوث ہیں۔

ملزمان نے مختلف علاقوں میں پولیس موبائل پر بم حملے اور اہلکاروں کی ٹارگٹ کلنگ کا انکشاف کیا ہے ۔ وزیراعلیٰ سندھ نے سندھ پولیس کی بہترین کارکردگی کرنے پر پانچ کروڑ روپے دینے کا اعلان کیا ہے۔

گرفتار ملزمان کے قبضے سے تین کلاشنکوف ، سات نائن ایم ایم پستول ، پانچ دستی بم، سات لیپ ٹاپ، دھماکہ خیز مواد، اور لٹریچر برآمد ہوا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں