سعودی عرب میں اسنومین کےخلاف فتوٰی جاری -
The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب میں اسنومین کےخلاف فتوٰی جاری

جدہ: سعودی عرب میں فتوٰی جاری کیا گیا ہے کہ برف سے پتلابناناغیراسلامی ہے، یہ فتوہ جدہ کےشیخ محمدصالح نے جاری کیا، سعودی صوبےتبوک میں شدیدبرف باری ہوئی ہےاورسیکڑوں سیاح وہاں پہنچےہیں،کچھ لوگ سنومین بھی بنارہے ہیں، اس پریہ فتوٰی طلب کیا گیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق رواں موسم سرما میں سعودی عرب کے صوبہ تبوک میں شدید برف باری ہوئی ہے جس کے بعد ایک ویب سائیٹ پر ایک سوال پوسٹ کیا گیاکہ کوئی باپ اپنے بچے کیلئے برف کی مدد سے پتلا بنا سکتا ہے یا نہیں؟ تو سودی مفتی نے اس کے جواب میں بتایا ہے کہ ایسا ہر گز نہیں کیا جا سکتا، یہاں تک صرف محظوظ ہونے کی خاطر بھی ایسا کر نا اسلامی نہیں ہو گا، کیونکہ اسلام میں مجسمے بنانے کی اجازت نہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ برف کے پتلے بنانے کا مطلب یہی ہے کہ کسی انسان یا جانور کا مجسمہ بنایا جا رہا ہے، تاہم اگر برف کی مدد سے کوئی بے جان چیز سے مشابہت رکھنے والی چیز بنائی جائے تو اس کی اجازت ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں