site
stats
عالمی خبریں

سعودی عرب میں قتل کے مجرم کوسزائے موت

ریاض: سعودی عرب کے دارالحکومت میں قتل کے مجرم کا سرقلم کردیا گیا، سعودیہ میں اس سال سزائے موت کی شرح میں اضافہ ہوا ہے۔

سعودی شہری سعد بن عبداللہ کو ایک اورشہری عبداللہ بن فرج الگاتھانی کے قتل کے جرم میں سزائے موت کی سزا دی۔ رواں برس سعودیہ میں 45 مجرموں کو سزائے موت دی جاچکی ہے۔

سزائے موت کی تصدیق سرکاری خبررساں ایجنسی نے وزارتِ داخلہ کی جانب سے جاری کردہ بیان نشر کرتے ہوئے کی۔

انسانی حقوق کے ادارے ایمنسٹی انٹرنیشنل کے مطابق سعودی عرب میں ہر سال سزائے موت کی شرح میں اضافہ ہورہا ہے۔

سال 2011کے بعد سے اب تک لگ بھگ سالانہ 80 مجرموں کو سزائے موت دی جارہی ہے اور گزشتہ سال 87 افراد کو سزائے موت دی گئی۔

سعودی عرب میں قتل، منشیات فروشی ، ڈکیتی سمیت دیگر سنگین جرائم کی سزا موت ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top