سندھ حکومت کا’سرکاری ہوٹل‘پارٹی کارکن کو دینے کا فیصلہ -
The news is by your side.

Advertisement

سندھ حکومت کا’سرکاری ہوٹل‘پارٹی کارکن کو دینے کا فیصلہ

لاڑکانہ: سندھ حکومت کا ایک اور کرپشن سامنے آگیالاکھوں روپے ماہانہ کما کردینے والے سرکاری ہوٹل’سمبارا‘ پیپلز پارٹی کے کارکن کو عونے پونے لیزپردینے کا منصوبہ تیارکرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق شہید ذوالفقارعلی بھٹو کے دور میں لاڑکانہ کے وی آئی پی روڈ پر پی آئی اے کی جانب سےقائم کئے گئے48 کمروں مختلف کانفرنس ہال، کینٹین، سوئمنگ پول اورشاندار پارک پرمشتمل’سمبارا ہوٹل روہڑی سے تعلق رکھنے والی تاج کارپوریشن کو 30 سال کے لئے لیز پردیا جارہا ہے۔

ذرائع کے مطابق تاج کارپوریشن کا مالک پاکستان پیپلزپارٹی کا پرانا کارکن ہے اور روہڑی شہر میں اس نے پارٹی کے لئے بہت سی خدمات انجام دیں ہیں۔
سمبارا ہوٹل اس وقت بھی ماہانہ دس لاکھ کے قریب حکومت سندھ کو کمروں اورہالز کے کرایوں کی مد میں کما کے دیتا ہے، اس کے باوجود محکمہ سیاحت کی جانب سےہوٹل کو لیز پر دینے کی دینے کی سمری وزیر اعلی سندھ کو بھجوا دی گئی ہے جس میں کروڑوں روپوں مالیت کے سمبارا ہوٹل کے لیے سیکریٹری سیاحت کی جانب سے یہ لکھا گیا ہے کہ عوام کے وسیع تر مفاد میں سمبارا ہوٹل کو ڈھائی لاکھ روپو ں کے عیوض تیس سال کی لیز پرتاج کارپوریشن کے حوالے کیا جائے۔

سرکاری ہوٹل کو لیز پر دینے کی سمری وزیرِ اعلیٰ ہاوئس میں موجود ہے جسے جلد منظور کیے جانے کا امکان ظاہرکیا جارہا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں