The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم، وزیرِاعلیٰ پنجاب اتفاق فاؤنڈری کیس میں بری

راولپنڈی: اتفاق فاؤنڈری ریفرنس کیس میں احتساب عدالت نے وزیرِاعظم نواز شریف، وزیراعلی پنجاب شہباز شریف اور ان کے مرحوم والد اور بھائی سمیت تمام بزنس پارٹنرز کو باعزت کردیا۔

احتساب کی خصوصی عدالت کے جج سہیل ناصر کی عدالت نے ہائی کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں شریف برادران کے خلاف اتفاق فاؤنڈری ریفرنس ری اوپن کرنے کی درخواست خارج کرکے شریف برادران کو ریفرنس سے بری کرنے کا فیصلہ سنا دیا ہے۔

مذکورہ ریفرنس کے خلاف شریف بردران کی جانب سے ہائی کورٹ میں درخواست زیرِ سماعت تھی، جس میں مؤقف اختیار کیا گیا تھا کہ ریفرنس جھوٹا، بے بنیاد اور انتقامی طور پر بنایا گیا ہے، جو ناصرف نا قابلِ سماعت ہے بلکہ اس ریفرنس کو قانونی بنیاد پر خارج کیا جائے۔

ہائی کورٹ سے ریفرنس خارج ہونے کے حکم کے ریکارڈ کی کاپی گزشتہ روز احتساب عدالت کو مل گئی تھی۔

آج احتساب عدالت کے جج سہیل ناصر نے عدالت عالیہ کے فیصلے کی روشنی میں چیئرمین نیب کی جانب سے اتفاق فاؤنڈری ریفرنس ری اوپن کرنے کی درخواست خارج کرکے میاں نواز شریف میاں شہباز شریف سمیت ان کے والد مرحوم میاں شریف اور بھائی میاں مرحوم عباس شریف کو بری کرنے کا فیصلہ سنایا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں