site
stats
سندھ

شہداء شکارپور، دہشت گردی کے خلاف سندھ بھر میں ہڑتال

سکھر: سانحہ شکار پر شہداء کمیٹی نےاندرون سندھ شٹر ڈاؤن کی کال دے دی ہے، مذاکرات پرعمل درآمد نہ ہونے کے خلاف پندرہ فروری کو لانگ مارچ کا اعلان بھی کردیا۔

شہداء شکار پور اور ملک سے دہشت گردی کے خاتمے کے لئے سکھر، روہڑی، کندھرا،صالح پٹ سمیت دیگر اندرون سندھ بیشتر شہروں میں شٹر ڈاﺅن ہے، شہداء کمیٹی کے چیئرمین علامہ مقصود کی سربراہی میں ریلی نکالی جائے گی۔

علامہ مقصود نے کہا ہے کہ سندھ حکومت نے مذاکرات پر عمل درآمد کیلئے تاحال کوئی اقدام نہیں اٹھایا، اگر اب بھی عمل نہیں کیا گیا تو پندرہ فروری کولانگ مارچ شروع کیا جائے گا اور سترہ مارچ کو سندھ کے وزیر اعلیٰ ہاﺅس کراچی کا گھیراﺅ کریں گے۔

انھوں نے کہا کہ سندھ حکومت دہشت گردوں کے خلاف کاروائی سے قاصر ہے، سندھ بھر میں کالعدم گرہوں کے دفاتر کھلے ہیں اور صوبہ بھر میں سانحہ کے بعد سے اب تک دہشتگردوں کی تشہیری مہم میں مسلسل اضافہ ہوتا چلا جارہا ہے، جس کے خلاف حکومت اور ریاستی ادارے کوئی ایکشن نہیں لے رہے ہیں۔

سکھر میں ہڑتال کے موقع پرشہر کے تمام پٹرول پمپس اور کاروباری مراکز بند ہیں، سڑکوں پر ٹریفک بھی معمول سے کم ہے، تحریک انصاف، جمعیت علماء اسلام، جماعت اسلامی نے ہڑتال کی حمایت کا اعلان کیا ہے۔

واضح رہے کہ شکار پور میں امام بارگاہ میں خود کش دھماکے میں 60 سے زائد شہید ہوگئے تھے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top