شیخ رشید نے نواز شریف کو مناظرے کا چیلنج دے دیا -
The news is by your side.

Advertisement

شیخ رشید نے نواز شریف کو مناظرے کا چیلنج دے دیا

سرگودھا : شیخ رشید احمد کا نواز شریف کو مناظرے کا چیلنج دیتے ہوئے کہنا تھا کہ کرپشن اور کمیشن کیلئے قطر، چین اور ترکی میں من پسند لوگوں کو سفیر لگایا گیا ہے۔

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے کہا ہے کہ ملتان کے الیکشن میں نواز شریف پر ایسا ٹھپہ لگایا ہے کہ ان کو سمجھ نہیں آ رہی ، 66 سال سے ہمارے ساتھ دھوکہ ہوتا آ رہا ہے، کبھی زرداری کبھی نواز اور کبھی مداری باریاں لیتے ہیں، ہمارے سکولوں اور دیہاتوں میں گدھے باندھتے ہیں، ڈسپنسریوں میں بیٹھک بناتے ہیں، پولیس، پٹواریوں اور تحصیلداروں سے تذلیل کرواتے ہیں۔

شیخ رشید نے کہا کہ بعض لوگ سمجھتے ہیں یہ تحریک فوج نے چلائی، میں کہنا چاہتا ہوں کہ نواز شریف فوج کے جی ایچ کیو کے گیٹ نمبر چار کی پیدوار ہیں لیکن عمران خان فوج کی پیداوار نہیں ہیں، لوگ ہم سے پوچھتے ہیں کہ ہمارے کنٹینر کا کیا بنے گا، دھرنے کا کیا بنے گا، شاہ محمود قریشی کی طبیعت مخدومانہ ہے وہ مذاکرات کرتے رہیں لیکن عمران خان کا ایک ہی نعرہ ہے کہ جان دے دوں گا لیکن استعفیٰ لے کر ہی جاﺅں گا۔

انہوں نے کہا کہ 6 سال پہلے میں کہتا تھا آصف زرداری اور نواز شریف ایک ہی سکے کے دو رخ ہیں، نواز شریف آصف زرداری کی انشورنس پالیسی ہیں اور آصف زرداری نواز شریف کی انشورنس پالیسی ہیں، بجلی کے بلوں کے ذریعے ایک ہی مہینے میں 70 ا رب روپے اضافی وصول کئے لیکن اسمبلی میں کوئی نہیں بولا جبکہ آج خواجہ آصف نے اسد عمر اور میرے خلاف پریس کانفرنس کی ہے، میں خواجہ آصف کو نہیں بلکہ نواز شریف کو مناظرے کی دعوت دیتا ہوں ۔

شیخ رشید  کا کہنا تھا کہ نواز شریف جی ایچ کیو کے گیٹ نمبر 4 کی پیداوار ہیں، عمران خان فوج کی پیداوار نہیں، نواز شریف سے کہتان ہوں کہ چوہدری افتخار اور نجم سیٹھی حوالے کرو، 2 کروڑ ووٹ لے کر دکھائیں گے، نہ لے سکے تو میرا نام نواز شریف رکھ دینا۔

شیخ رشید نے کہا کہ اس ملک کی بدنصیبی ہے اس ملک میں دین کی قیادت مولانا فضل الرحمان کے ہاتھ میں آئی ورنہ ہم بھی اس ملک میں نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کا علم بلند کرنا چاہتے ہیں، مولانا فضل الرحمان نام اسلام کا لیتے ہیں اور نظریں اسلام آباد کی طرف رکھتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جو لوگ سمجھتے ہیں کہ عمران خان استعفے کے بغیر چلا جائے گا وہ عقل کے اندھے ہیں، محرم کے بعد عمران خان سارے ملک میں دھرنوں کی اپیل کریں گے، شٹرڈاﺅن کریں گے اور پہیہ جام کریں گے، عمران خان نواز شریف کی حکومت سے استعفیٰ لے کر ہی ڈی چوک سے آئے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں